عثمان کاکڑ کا انتقال: جوڈیشل کمیشن کسی نتیجے پر نہ پہنچ سکا

42

کوئٹہ (صباح نیوز) پشتونخوا ملی عوامی پارٹی کے رہنما عثمان کاکڑ کے انتقال سے متعلق وجوہات جاننے کیلیے تشکیل دیا گیا جوڈیشل کمیشن کسی نتیجے پر نہیں پہنچ سکا، کیس سے متعلق گواہی اور بیان قلم بند کرانے کے لیے کوئی شخص کمیشن کے سامنے پیش نہیں ہوا جس کی وجہ سے کمیشن کسی نتیجے پر نہیں پہنچ سکا، جوڈیشل کمیشن نے رپورٹ جاری کر دی۔ بلوچستان حکومت نے بلوچستان ہائیکورٹ کے جج جسٹس نعیم اختر افغان اور نذیر احمد لانگو پر مشتمل کمیشن یکم جولائی کو تشکیل دیا تھا۔ واضح رہے کہ عثمان خان کاکڑ کو سر پر چوٹ لگنے کا واقعہ کوئٹہ میں ان کے گھر میں 17 جون کو پیش آیا تھا، 19 جون کوانہیں علاج کیلیے کراچی منتقل کیا گیا تاہم وہ جانبر نہ ہوسکے۔ پشتونخوا میپ اور عثمان کاکڑ کے اہلخانہ نے عدالت عظمیٰ یا اقوام متحدہ کی سطح پر کمیشن کا مطالبہ کیا تھا۔