اقتصادی رابطہ کمیٹی ،ایک ارب ڈالر کی کورونا ویکسین خریدنے کی منظوری

65

اسلام آباد(خبر ایجنسیاں) اقتصادی رابطہ کمیٹی نے ایک ارب ڈالر کی چار مختلف اقسام کی ویکسین کی خریداری کی منظوری دے دی۔وزیر خزانہ شوکت ترین کی زیر صدارت کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی کا اجلاس ہوا، اجلاس میں 20 نکاتی ایجنڈے کا جائزہ لیا گیا، کابینہ نے ملک بھر میں 70 لاکھ افراد کو ویکسین لگانے کےلیے ایک ارب ڈالر کی ویکسین خریداری کی منظوری دے دی، ویکسین کی خریداری کےلیے پہلے مرحلے میں 18 کروڑ ڈالر کی منظوری دی گئی ہے، 18 کروڑ ڈالر کی رقم این ڈی ایم اے کو ویکسین کی خریداری کےلیے دی جائے گی، منظوری کے تحت ایک ارب ڈالر کی کین سائنو، سائنو فارم، سائنو ویک اور فائزر ویکسین خریدی جائے گی۔کابینہ نے کم ترقی یافتہ علاقوں کے طلباءکی فیس ادائیگی کےلیے گرانٹ، احساس کوئی بھوکا نہ سوئے فنڈ کے قیام، کنٹرولر جنرل آف پاکستان کےلیے 1 ارب 16 کروڑ روپے کی تکنیکی سپلیمنٹری گرانٹ، وزارت تعلیم کےلیے 37 کروڑ 80 لاکھ روپے کی
تکنیکی ضمنی گرانٹ، آڈیٹر جنرل آف پاکستان کےلیے 33 کروڑ روپے کی تکنیکی سپلیمنٹری گرانٹ، کنٹرولر جنرل آف پاکستان کے وفات پا جانے والے ملازمین کی فیملیز کو وزیراعظم کے امدادی پیکج کےلیے 35 کروڑ کی منظوری دے دی۔اجلاس میں ترسیلات زر کے حوالے سے نئی اسکیم کی مارکیٹنگ کیمپین کےلیے 74 کروڑ روپے سے زائد کی گرانٹ کی منظوری دی گئی، اجلاس میں سپریم کورٹ کے ججز کی سرکاری رہائش گاہوں کی تعمیر و مرمت کےلیے فنڈز اور وزارت انسانی حقوق کےلیے 2 کروڑ 21 لاکھ روپے سے زائد کی گرانٹ بھی منظور کی گئی، جبکہ اسپیشل کمیونیکیشن آرگنائزیشن کے اضافی فنڈز کےلیے وزارت آئی ٹی کی سمری منظور کرلی، اس کے علاوہ انٹیلی جنس بیوروکےلیے تکنیکی سپلیمنٹری گرانٹ کی منظوری بھی دی گئی ہے۔