جب عامر پر پابندی تھی تو پی سی بی نے ساتھ دیا،احسان مانی

104

کراچی (اسٹاف رپورٹر)پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین احسان مانی کا کہنا ہے کہ قومی کرکٹرز کو میڈیا ٹریننگ کی ضرورت ہے اور انہیں سوشل میڈیا کے استعمال کے حوالے سے محتاط ہونا پڑے گا۔ احسان مانی کا کہنا ہے کہ فاسٹ بولر محمد عامر کے انٹرنیشنل کرکٹ چھوڑنے کے فیصلے سے افسوس ہوا۔ تفصیلات کے مطابق چیئرمین پی سی بی احسان مانی کا کہنا ہے کہ محمد عامر بہت اچھا کھلاڑی ہے لیکن اس نے خود سے ہی فیصلہ کیا کہ وہ مزید نہیں کھیلنا چاہتا جو کہ افسوس کی بات ہے۔ انہوں نے کہا کہ محمد عامر کی وجہ سے بھی میڈیا پر بہت کچھ ہوا، وہ ابھی نوجوان بولرہے ،جب اس پر اسپاٹ فکسنگ کرنے کی وجہ سے 5 سالہ پابندی تھی تو پاکستان کرکٹ نے اس کا ساتھ دیا اور جب وہ کھیل میں واپس آئے تو اس وقت بھی کرکٹ بورڈ نے اسے بہت سپورٹ کیا۔ احسان مانی نے کہا کہ عامر اب انٹرنیشنل کرکٹ نہ کھیلنے کا فیصلہ کر ہی چکے ہیں تو میری نیک خواہشات ان کے ساتھ ہیں کہ ان کے لیے مستقبل میں بہتری پیدا ہو۔ سوشل میڈیا پر سابق کپتانوں محمد حفیظ اور سرفراز احمد کے درمیان ہونے والی بحث اور پھر تنازع بننے پر پاکستان ٹیم منجمنٹ کو مداخلت کرنا پڑی کیونکہ پی سی بی کے اعلیٰ عہدیدار اس واقعے پر خوش نہیں تھے۔کرکٹرز کی وجہ سے پیدا ہونے والے تنازعات کے حوالے سے پوچھے جانے والے ایک سوال کے جواب میں چیئرمین پی سی بی احسان مانی نے کہا کہ حفیظ اور سرفراز والا معاملہ مس انڈر اسٹینڈنگ تھی، حفیظ نے جو بات کی تھی اس پر انہیں ردعمل ملا۔ میں سمجھتا ہوں کہ کھلاڑیوں کو میڈیا ٹریننگ کی ضرورت ہے، جب وہ سوشل میڈیا پر جاتے ہیں تو ساری دنیا انہیں دیکھ رہی ہوتی ہے، اس پر تبصرے ہوتے ہیں، بحث شروع ہوجاتی ہے اور چیزیں آپ کے کنٹرول میں نہیں رہتیں۔