نیب نے 2 سال تک کی کارکردگی رپورٹ جاری کردی

185

اسلام آباد: نیب نے سال 2018ء سے 2020ء تک کی کارکردگی رپورٹ جاری کردی ہے اور سب سے زیادہ شکایات سکھر سے ملیں ہیں جبکہ چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال کا کہنا تھا کہ تین سال کی کارکردگی شاندار رہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق قومی احتساب بیورو کی گزشتہ تین سالہ کارکردگی کی رپورٹ جاری کردی گئی ہے اور چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال ادارہ کی کارکردگی رپورٹ سے بہت خوش ہیں جبکہ 1لاکھ 54ہزار 697 شکایات موصول ہوئیں ہیں اور اربوں روپے کی ریکوری کی گئی ہے۔

تین سالہ کارکردگی رپورٹ کے مطابق نیب راولپنڈی کو تین سال میں 21 ہزار 71 شکایات موصول ہوئیں، نیب لاہور کو 29 ہزار 242، نیب خیبرپختونخوا کو 12 ہزار 627 شکایات موصول ہوئیں جبکہ نیب بلوچستان کو 25 سو اور نیب سکھر کو 75ہزار 944 ، نیب ملتان کو 13ہزار تین سو 13 شکایات موصول ہوئیں اور نیب نے اس مدت میں اربوں روپے وصول کرکے قومی خزانہ میں جمع کرائے۔

نیب اعلامیہ کے مطابق چیئرمین نیب ریٹائرڈ جسٹس جاوید اقبال کا کہنا تھا کہ نیب کرپشن کے خاتمے اور لوٹی ہوئی رقم کی واپسی کے لیے بنایا گیا، پاکستان دنیا کا واحد ملک ہے جہاں چین نے کرپشن کے خاتمے کا ایم او یو دستخط کیا، نیب سارک ممالک کے لیے رول ماڈل ہے۔