نواز شریف دھوکا دئکر لندن گئے، اسلام آباد ہائیکورٹ

123

اسلام آباد(خبر ایجنسیاں)نوازشریف حکومت اور عوام کو دھوکا دے کر لندن گئے، اسلام آباد ہائیکورٹ کے ریمارکس۔تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس عامر فاروق اور جسٹس محسن اختر کیانی پر مشتمل ڈویژن بینچ کی عدالت نے سابق وزیراعظم نواز شریف کی ایون فیلڈ اور العزیزیہ ریفرنس میں سزا کے خلاف کیس کی سماعت کے دوران جسٹس محسن اختر کیانی نے ریمارکس دیے کہ نواز شریف کو پتا ہے کہ وہ پورے سسٹم کو شکست دیکر باہر گئے ہوئے ہیں ،وہ باہر بیٹھ کر حکومت اور اس ملک پر ہنستے ہوں گے، یہ ایک شرمناک طرز عمل ہے حکومت کو بھی آئندہ سوچنا چاہیے۔ نواز شریف حکومت اور عوام کو دھوکا دے کر لندن گئے ۔ایڈیشنل اٹارنی جنرل طارق کھوکھر نے عدالت کو بتایا کہ نواز شریف نے پھر وارنٹس گرفتاری وصول کرنے سے انکار کر دیا نوازشریف کے وارنٹس گرفتاری کی قونصل اتاشی کے ذریعے پھر تعمیل نہ ہو سکی ۔قونصل اتاشی حسن نواز کے سیکرٹری کی درخواست پر دوبارہ وارنٹس لیکر گئے مگر کسی نے وصول نہیں کیے ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے عدالت کو یہ بھی بتایا کہ قونصل اتاشی حسن نواز کے سیکرٹری وقار احمد کے فون کرنے پر دوبارہ وارنٹس لیکر گئے تھے۔ذاتی حیثیت میں پہلی بار جانے پر بھی اتاشی سے کسی نے وارنٹس وصول نہیں کیے تھے۔ عدالت نے استفسار کیا کہ کیا وارنٹس سے متعلق کوئی پیشرفت ہو سکی ہے؟ جس پر ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے عدالت کو بتایا کہ جی نہیں کوئی پیشرفت نہیں ہو سکی قونصل اتاشی عبدالحنان ایون فیلڈ اپارٹمنٹس گئے تھے ۔مسٹر ایڈی نام کا شخص وہاں ملا اس نے کہا وارنٹس وصول نہیں کیے جائیں گے، ہمیں برطانیہ میں سفارتخانے سے جواب موصول گیا ہم نے قونصل اتاشی سے کہا ہے کہ وہ اپنا تصدیق شدہ بیان بھی بھیج دیں قونصل اتاشی کا تصدیق شدہ بیان کسی بھی وقت پہنچ جائے گا۔ برطانیہ میں کائونٹی کورٹ کے ذریعے بھی وارنٹس کی تعمیل میں رکاوٹ ہو گی ۔کامن ویلتھ آفس سے رابطہ کیا گیا تھا ہمیں بتایا گیا ہے کہ پاکستانی عدالت کے احکامات پر عملدرآمد کے وہ پابند نہیں ۔جس پر جسٹس عامر فاروق نے ریمارکس دیے کہ اس کا مطلب ہے وہ ہمیں سہولت فراہم نہیں کریں گے ۔اس موقع پر ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے عدالت کو بتایا کہ دفتر خارجہ کے ڈائریکٹر یورپ محمد مبشر بھی عدالت میں موجود ہیں جس پر جسٹس عامر فاروق نے ہدایات دی کہ آپ کے پاس جو دستاویزات آئی ہیں انہیں باقاعدہ فائل کریں، ہم ان دستاویزات کو دیکھ کر اپنا آرڈر جاری کریں گے۔ اشتہار جاری کرنے ہیں یا جو بھی کرنا ہے ہم دیکھیں گے، ہم نے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کیے ،دیکھنا ہے کہ کیا جان بوجھ کر عدالتی کارروائی سے فرار کیا جا رہا ہے؟ عدالت نے وارنٹس کی عدم تعمیل سے متعلق قونصل اتاشی کا تحریری بیان طلب کر لیا۔ اس موقع پر جسٹس محسن اختر کیانی نے ریمارکس دیے کہ ساری کارروائی مکمل کرنے کا ایک مقصد ہے ہم چاہتے ہیں ملزم کل واپس آکر یہ نہ کہے اسے پتا نہیں۔ اس موقع پر نیب پراسیکیوٹر نے عدالت کو بتایا کہ ملزم خود کو جان بوجھ کر چھپا رہا ہے جس پر جسٹس عامر فاروق نے ریمارکس دیے کہ وہ چھپا رہا ہے؟ملزم پوری قوم سے خطاب کر رہا ہوتا ہے۔ عدالت نے برطانیہ میں قونصل اتاشی کا ویڈیو لنک پر بیان ریکارڈ کرنے کا فیصلہ کیا ہے قونصل اتاشی کا بیان ریکارڈ کر کے آگے بڑھیں گے نیب پراسیکوٹر نے عدالت کو بتایا کہ ویڈیو اسکینڈل میں نوازشریف کی اضافی دستاویزات کی درخواست بھی آج لگی ہے ہماری استدعا ہے کہ نوازشریف کی اس متفرق درخواست کو بھی خارج کیا جائے۔ عدالت نے ریمارکس دیے کہ اس کیس کو بعد میں دیکھیں گے عدالت نے نوازشریف سے ایون فیلڈ میں سزا معطلی ختم کرنے پر آئندہ منگل کو جواب طلب کر لیا نواز شریف کو ایون فیلڈ ریفرنس میں سزا معطلی ختم کرنے کی درخواست پر بھی نوٹس جاری ۔نیب نے ایون فیلڈ میں سزا معطلی کالعدم قرار دینے کی درخواست دائر کی تھی۔ قونصل اتاشی کا بیان بھی آئندہ بدھ کے دن ڈیڑھ بجے ریکارڈ کیا جائے گا عدالت نے کیس کی سماعت ملتوی کر دی ۔