ہندوانہ کلچر سے مرعوب حکمران کشمیر کا مقدمہ نہیں لڑسکتے، راشد نسیم

84

لاہور(نمائندہ جسارت) نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان راشد نسیم نے کہاہے کہ ہندوانہ کلچر سے مرعوب حکمران کشمیر کا مقدمہ لڑسکتے ہیں نہ ملک کو موجودہ بحرانوں سے نکالنے کی اہلیت رکھتے ہیں ۔ پی ایس ایل 5 کی افتتاحی تقریب کا کروڑوں روپے کا ٹھیکا ایک بھارتی رقاصہ کو دے کر ناصرف کشمیریوں کے زخموں پر نمک پاشی کی گئی بلکہ تقریب کا بھی بیڑا غرق کیا گیا جس سے شائقین کو سخت مایوسی ہوئی اور اب ملک بھر میں اس پر سخت تنقید ہورہی ہے ۔ کھلاڑی وزیراعظم نے معیشت تو کیا ٹھیک کرنی تھی ، وہ کرکٹ کو بھی لے ڈوبیں گے ۔ 18 ماہ کی حکومتی کارکردگی نے ثابت کردیا کہ یہ ملکی تاریخ کے نااہل اور ناکام ترین حکمران ہیں ۔ ان خیالات کااظہار انہوںنے منصورہ میں کارکنان کی تربیتی ورکشاپ سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔راشد نسیم نے کہاکہ تبدیلی کی ڈگڈگی بجا کر اور مداری لگا کر لوگوں کو پیچھے لگانے والوں نے قوم کو سخت مایوس کیاہے ۔ شرح نمو خطے کے ممالک میں کم ترین اور مہنگائی بدترین صورت اختیار کر چکی ہے ۔ سودی معیشت سے ترقی کے خواب دیکھنے والے خود بھی فریب میں مبتلا ہیں اور عوام کو بھی دھوکے میں رکھنا چاہتے ہیں ۔ انہو ںنے کہاکہ جب تک قرآن و شریعت کا نظام نافذ نہیں ہوتا ، ملکی مسائل کم نہیں ہوںگے ۔ جماعت اسلامی ہی ملک کو موجودہ مشکلات سے نکال سکتی ہے ۔