۔2023ء تک کوئی بھی سال عام انتخابات کانہیں،ہمایوں اختر

54

لاہور (آن لائن) پاکستان تحریک انصاف کے سینئر مرکزی رہنما وسابق وفاقی وزیر ہمایوں اختر خان نے کہا ہے کہ حکومت کو قرضے لینے کا طعنہ دینے والے ملک کو قرضوں کے سمندر میں دھکیل کر گئے ،نا تجربہ کاری کا شوروغوغا کرنے والی اپوزیشن درست کہتی ہے کہ موجودہ
حکومت کوسابقہ حکمرانوں کی طرح کرپشن کرنے کا کوئی تجربہ نہیں ۔حضرت امام حسین ؓ اور ان کے رفقاء نے دین اسلام کیلیے لازوال قربانی دی جسے رہتی دنیا تک یاد رکھا جائے گا۔ اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ (ن) لیگ حکومت کے ستون سمجھے جانے والے اسحاق ڈار نے کاسمیٹیکس پالیسیوں کے ذریعے معیشت کے ساتھ جو کھلواڑ کیا اس کا خمیازہ آج پوری قوم بھگت رہی ہے ۔ حکومت معیشت کی پائیدار ترقی کے لیے ڈھانچہ جاتی اصلاحات کر رہی ہے اوریہ مرحلہ کیمو تھراپی سے کم نہیں ۔ سابقہ حکمرانوںکی وجہ سے ملک قرضوں کے چنگل میں ایسا پھنسا یاہے کہ قرضوں کو اتارنے کیلیے نئے قرضے لینے پڑے ۔ انہوںنے کہا کہ خواب دیکھنے پر کوئی پابندی نہیں لیکن پیپلز پارٹی اور(ن) لیگ کا کھلی آنکھوں سے دوبارہ اقتدار میں آنے کے خواب دیکھنا اچھی علامات نہیں۔ ان کی خواہشات کے برعکس 2023ء تک کوئی بھی سال عام انتخابات کانہیں بلکہ ترقی کی رفتار مزید تیز ہونے کا سال ثابت ہوگا ۔