اثاثہ جات کیس میں  نیب کو حمزہ شہباز کیخلاف  مزید اہم شواہد مل گئے

56

لاہور(آئی این پی) نیب لاہور نے پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز شریف کیخلاف آمدن سے اثاثہ جات کیس میں مزید اہم شواہد حاصل کر لیے ،نیب نے حمزہ شہباز کے بینک اکائونٹس اور ایف بی آر کا 11سالہ ریکارڈ حاصل کرلیا
جس میں تضاد سامنے آیا ہے ۔ ذرائع کے مطابق حمزہ شہباز نے 2006ء میں 33لاکھ آمدن ظاہرکی جبکہ بینکوں میں 12لاکھ روپے موجود تھے ۔2007ء میں آمدن 42لاکھ روپے کے قریب جبکہ بینک ریکارڈ کے مطابق آمدن13لاکھ روپے تھی۔ نیب رپورٹ کے مطابق2008 ء میں ایف بی آر ریکارڈ کے مطابق 48لاکھ جبکہ بینک ریکارڈ کے مطابق 16لاکھ 7ہزار روپے ہے۔2009ء میں 73لاکھ روپے آمدن ایف بی آر کے روبرواور بینک میں 26 لاکھ روپے آئے۔2010ء میں 96لاکھ ظاہر کیے گئے جبکہ بینک میں 51لاکھ روپے موجود تھے۔2011ء میں ایف بی آر کے ریکارڈ میں1کروڑ روپے ظاہر کیے جبکہ بینک ریکارڈ میں 86لاکھ روپے تھے ۔اسی طرح باقی سال کے حوالے سے بھی تضادہیں۔
حمزہ شہباز کیخلاف شواہد