صہیونی فوج نے فلسطینی بھائی گرفتار کرلیے‘ والدہ پر وحشیانہ تشدد

109

مقبوضہ بیت المقدس (انٹرنیشنل ڈیسک) فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے کے وسطی شہر رام اللہ میں بیتونیا کے مقام پر صہیونی فوج نے 2 فلسطینی سگے بھائیوں کو تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد حراست میں لے لیا جب کہ ان کی والدہ کو بھی وحشیانہ تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔مقامی ذرائع نے مرکزاطلاعات کو بتایا کہ قابض فوج نے نوح ہریش نامی شہری کے گھر پر چھاپہ مارا اور ان کے 2 بیٹوں 25سالہ محمود ھریش اور اس کے بھائی 22سالہ احمد ھریش کو حراست میں لینے کے بعد نامعلوم مقام پر منتقل کردیا۔صہیونی فوج نے گھر میں موجود دونوں فلسطینی لڑکوں کی والدہ کو بھی تشدد کا نشانہ بنایا۔ گھرمیں قیمتی سامان کی توڑپھوڑ کی۔ قیمتی زیورات اور نقدی کی لوٹ مار کے ساتھ ایک لیپ ٹاپ اور موبائل فون بھی ضبط کرلیے ۔ حراست میں لیے گئے دونوں فلسطینی نوجوانوں کو قابض فوج پہلے بھی گرفتار کرکے جیلوں میں ڈال چکی ہے ۔عینی شاہدین نے بتایا کہ اسرائیلی فورسز نے محمود اور احمد کی والدہ کے سرمیں بندوق کے بٹ مارے جس کے نتیجے میں وہ شدید زخمی ہوگئیں۔ خاتون کو زخمی حالت میں اسپتال منتقل کیا گیا ہے۔
فلسطینی بھائی گرفتار