حریم شفیق

10 مراسلات 0 تبصرے

قطرے

ڈور بیل کی آواز پر اُس نے ناگواری سے دیوار پہ لگے گھڑیال کی طرف نگاہ ڈالی۔ دن کے بارہ بج رہے تھے۔ وہ...

منزل بے نشاں ٹھہری

اُس نے آئینے میں اپنا تنقیدی جائزہ لیا… عکسِ خوبرو نے OK کا اشارہ دیا۔ اس نے ہاتھوں کی پوروں سے اسٹیپس میں کٹے...

’’مان‘‘

سنو! یہ جو تم ہو نا… بہت قیمتی ہو، نازک آبگینہ ہو، رنگِ کائنات ہو، سیپ میں بند موتی ہو، شرم و حیا کا...

تنہائی کے ساتھی

’’ٹھک… ٹھک… ٹھک…‘‘ دروازہ بج رہا تھا۔ اس نے جائے نماز تہہ کی اور دروازہ کھولا۔ سامنے فرش پہ ناشتے کی ٹرے رکھی تھی۔ اس...

کھلونے اب خواب ہوئے

’’ابا وہ بالوں والی گڑیا دلا دو نا!‘‘ ننھی زینب نے حسرت بھری نظروں سے کھلونوں کی دکان کے شوکیس میں سجی گڑیا کو...

انتظار

آسمان پہ اُڑتے غول در غول پرندے اسے بہت بھاتے۔ جب شام کو پرندوں کے گروہ واپسی کے لیے رختِ سفر باندھتے تو وہ...

زہریلے

ڈراما الیکٹرانک میڈیا کا ایک ایسا سیگمنٹ ہے جسے ہر بچہ، بوڑھا، جوان چاہے پڑھا لکھا ہو یا اَن پڑھ، دیکھتا ہے۔ گزشتہ دنوں...

اصل حق

’’وہ دیکھو بوبو آرہی ہے۔‘‘صنوبر نے ہانیہ کو سیاہ عبایا میں ملبوس آتے دیکھ کرقہقہہ لگایا۔ ثنا اور سحرش نے سامنے دیکھا اور محض مسکرا...

سفر حج کورونا سے پہلے

فون کی بیل بجی، نام دیکھا تو بڑے بھائی جو ماموں زاد ہیں، کا نمبر تھا۔ صبح سے ہر بیل پر دل کی دھڑکن...

عید کی تیاری

’’ارے یہ دروازہ کیوں کھلا ہے؟‘‘ زبیدہ بیگم گرمی میں پسینے سے شرابور اندر داخل ہوتے ہوئے بولیں۔ صالحہ صحن میں تخت پر گم صم...
پرنٹ ورژن
Friday magazine