الخدمت کی “لائیو ٹیلی تھون” میں کروڑوں کی عطیات

64

سابق کپتان سرفراز احمد کا 10بچوں کی کفالت، عمیر ثنا فاؤنڈیشن کی جانب سے 10لاکھ کا اعلان

الخدمت سے متعلق آگاہی و تحقیق کے بعد ہم اس نتیجے پر پہنچے ہیں کہ اچھا کام نام اور پہچان ضرور بناتا ہے خواہ وہ کسی فرد کا نام ہو یا کسی ادارے کا۔ الخدمت نے اپنا نام اور پہچان اپنے کام اور خدمات کی وجہ سے بنائی ہے اور اس کے پیچھے ایک دو دن کی نہیں کئی دہائیوں کی محنت اور کاوشیں ہیں۔ گزشتہ تین دہائی سے زائد عرصے سے لوگوں کی بے مثال خدمات نے الخدمت کو ایک ممتاز حیثیت دی ہے۔ آج نہ صرف پاکستان بلکہ دنیا بھر میں الخدمت کو منفرد مقام اور شناخت حاصل ہے اور دنیا بھر میں موجود پاکستانی اسے ایک قابل بھروسہ ادارے کے طور پر پہچانتے ہیں۔
پاکستانی خواہ امریکا میں ہوں یا مڈل ایسٹ میں سب الخدمت کی خدمات سے آشنا ہیں اوراس پر بے پناہ اعتمادکرتے ہیں۔ لوگ اس کا نام سنتے ہی اطمینان کا اظہار کرتے ہیں اور یہ کہتے نہیں تھکتے کہ الخدمت پر انہیںمکمل اعتماد ہے کیوں کہ انہیں معلوم ہے کہ الخدمت ان کے دیے گئے ایک ایک پائی کی امین ہے اور یہ امانتوں کو ٹھیک طور پر خرچ کرتی ہے۔ بعض لوگ تو اس کی تصدیق جماعت اسلامی جیسی خالص امانت دار اور ایمان دار جماعت کی نسبت سے بھی کرتے ہیں ۔
لوگوں کی انہی امانتوں کو یکجا کرنے اور سارا سال جاری خدمات کو وسعت دینے کے لیے الخدمت کی جانب سے’’لائیو ٹیلی تھون‘‘ کا اہتمام الخدمت کے مرکزی آفس میں کیا گیا ۔ ٹیلی تھون میں چند گھنٹوں کے دوران کروڑوں کے عطیات جمع ہوئے۔ دنیا بھر میں مقیم پاکستانیو ں نے الخدمت پر اپنے بھرپور اعتماد کا اظہار کیا اور دل کھول کر عطیات دیے اورالخدمت کے کاموں کو زبردست خراج تحسین پیش کیا۔
الخدمت کی جانب سے ٹیلی تھون میں تین سیشن کا اہتمام کیا گیا‘ پہلے سیشن کے میزبان ڈائریکٹر ڈائیگنوسٹک سروسز انجینئر صابر احمد تھے جب کہ مہمانوں میں PharmEvoکے سربراہ محمد ہارون قاسم، پروفیسر آف نیورو لوجی آغا خان یونیورسٹی کراچی ڈاکٹر واسع شاکر، ڈاکٹر ثاقب انصاری ایم ڈی چلڈرن اسپتال‘ پراجیکٹ ڈائریکٹر الخدمت ڈائیگنوسٹک سینٹر ڈاکٹر نائلہ طارق اور انڈس اسپتال کے شعبہ ریڈیالوجی کے سربراہ ڈاکٹر کاشف شازلی تھے۔ دوسرے سیشن کے میزبان ممبر گورننگ باڈی آرٹس کونسل آف پاکستان کراچی شکیل خان جب کہ مہمان سابق کیپٹن قومی کرکٹ ٹیم سرفراز احمد، صدرآٹس کونسل آف پاکستان کراچی سید احمد شاہ‘ ممبر کورننگ باڈی کاشف گرامی، عمران ایمو، ممتاز ماہر امراض اطفال و اسپورٹس تجزیہ کار ڈاکٹر کاشف انصاری، ڈائریکٹر ریلیف Covid-19 قاضی سید صدرالدین، یوسی چیئر مین جنید مکاتی۔ جبکہ تیسرے سیشن کے مہمان ڈائریکٹر میڈیا اینڈ مارکیٹنگ و مواخات نوید علی بیگ اور ڈائریکٹر شعبہ صحت ڈاکٹراظہر چغتائی تھے ۔
اس موقع پر کینیڈا، یو اے ای، برطانیہ، سعودی عرب و دیگر ملکوں سے لائیو کالز بھی موصول ہوئیں جن میں لوگوں نے الخدمت کے کاموں اور اس کے رضا کاروں کو شاندار خراج تحسین پیش کیا۔
ڈاکٹر نائلہ طارق نے ٹیلی تھون میں گفتگو کرتے ہو ئے کہا کہ کراچی کے سرکاری اسپتالوں میں لاوارثوں جیسی صورت حال ہے۔ الخدمت اپنی ڈائیگنوسٹک سروسز کے ذریعے جدید سہولتیں فراہم کر رہی ہے، لوگوں کو چاہیے اپنا خیال کریں۔ کورونا خطرناک وائرس ہے جس نے دنیا بھر میں تباہی مچائی ہے۔ ہمیں باربار ہاتھ دھونے کی عادت اپنانا ہو گی،خود کو اور دوسروں کو اس وبا سے محفوظ رکھنے کے لیے ماہرین کی جانب سے جاری ہدایات پر عمل کرنا ہوگا ۔
ڈاکٹر عبد الواسع شاکر نے کہا کہ کورونا کی وبا کو سنجیدگی سے لینا ہوگا،آئندہ تین ماہ تک زندگی کو اسی طرح گزارنا ہوگا اس کے بعد حالات نارمل ہونے میں 6 سے 12ماہ لگیں گے۔ اس وبا کا ہمیں طویل مدت تک سامنا رہ سکتا ہے۔ ہمیں صحت مند زندگی کو اپنانا ہوگا ۔
ڈاکٹر ثاقب انصاری نے کہا کہ کورونا کے 90 فیصد مریض ٹھیک ہو جاتے ہیں ۔ ایسے مریض‘ جن کا سانس کا مسئلہ ہو‘ اُن کا ٹیسٹ کر کے جائزہ لیا جاتا ہے۔ ایسے مریض جن کی قوت مدافعت بحال ہو رہی ہو پلازمہ لگا کر ان کی زندگی کو بچایا جا سکتا ہے ۔
PharmEvoکے سربراہ محمد ہارون قاسم نے جو کہ الخدمت کی کورونا ٹیسٹنگ لیب کے قیام میں بھرپور معاونت کر رہے ہیں‘ بطور مہمان اپنی بات چیت میں کہا کہ کورونا ٹیسٹنگ لیب پر ڈھائی کروڑ روپے کی لاگت آئے گی جو ان شااللہ جلد پوری کر دی جائے گی۔ یہ دراصل الخدمت لیبارٹری اور ڈائیگنوسٹک کمپیئن کا حصہ ہے جو کہ زیر تعمیر ہے‘ اس پر اندازاً 40 کروڑ روپے کے اخراجات آئیں گے جس میں اب تک 10کروڑ روپے خرچ کیے جا چکے ہیں ،جبکہ امید ہے کہ باقی معاونت بھی اہلِ خیر کے تعاون سے جلد ہو جائے گی ۔ ان شااللہ اس لیب میں ایم آرآئی اور سی ٹی اسکین کا بھی انتظام کیا جائے گا ۔کورونا ٹیسٹنگ لیب سے شہریوں کو ٹیسٹ کی معیاری اور کم قیمت سہولت میسر آئے گی ۔
ڈاکٹر کاشف انصاری نے امریکا سے لائیو ٹیلی تھون میں بات چیت کر تے ہوئے کہا کہ کسی این جی اوکو اللہ اور اللہ کے بندوں کے لیے کام کر تے دیکھا ہے تو وہ الخدمت ہے ۔میں نے آج تک نہیں سنا کہ الخدمت نے کسی کا ایک پیسہ بھی اِدھر اُدھر کیا ہو۔ میں حلفیہ بیان دیتا ہوں کہ الخدمت امانت دار ہے۔ انہوں نے کہا کہ امریکا میں حالات خراب ہیں۔کورونا جان لیوا وبا ہے، مگر پاکستان، بھارت اور بنگلہ دیش پر اللہ کا خاص کرم ہے۔ لوگوں کو چاہیے کہ ماسک کا استعمال کریں ۔ مساجد اور شاپنگ مالز میں جائیں تو احتیاط برتیں۔ انہوں نے اس موقع پر عمیر ثنا فاؤنڈیشن کی جانب سے الخدمت کے لیے 10لاکھ روپے کے عطیہ کا اعلان کیا ۔
انجینئر صابر احمد نے کہا کہ الخدمت کی ڈائیگنوسٹک سروسز ٹیسٹ کی جدید اور معیاری سہولتیں فراہم کر رہی ہے۔ الخدمت صحت کی سہولتوں کو وسعت دینا چاہتی ہے اس کے لیے الخدمت کو مخیر حضرات کا تعاون درکار ہے۔ ڈاکٹر کاشف شازلی نے کہا کہ کورونا کی وبا حقیقت ہے لوگوں کو اس وبا کوسنجیدہ لینا ہوگا اور اس کے لیے احتیاطی تدابیر اختیار کرنا ہوں گی ۔
ٹیلی تھون کے دوسرے سیشن میں شریک آرٹس کو نسل پاکستان کراچی کے صدر سید احمد شاہ نے کہا کہ کراچی پورے پاکستان کو روزگار فراہم کرتا ہے۔ کراچی بند ہوتا ہے تو پورا پاکستان بند ہو جاتا ہے۔ الخدمت کے کام کو پھیلانے کی ضرورت ہے۔ کراچی ہر مشکل وقت میں لوگوں کی مدد میں آگے نظرآتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اللہ کی راہ میں خرچ کیا گیا آخرت میں کام آئے گا۔ احمد شاہ نے کہا الخدمت جس جذبہ ولگن کے ساتھ کام کر رہی ہے میں لوگوں سے اپیل کروں گا کہ وہ کورونا ٹیسٹنگ لیب میں اس کو سپورٹ کریں۔ سید احمد شاہ نے کہا الخدمت کا کفالت یتامیٰ پروگرام بہترین ہے۔ انہوں ایک یتیم بچے کی کفالت کی ذمہ داری نبھا نے کا بھی اعلان کیا۔
قاضی سید صدرالدین نے کہا کہ لوگوں میں بڑاجذبہ ہے وہ اللہ کی راہ میں خرچ کرنا چاہتے ہیں۔ ایک میاں بیوی پورے رمضان اپنے گھر پر 60 سے 70 افراد کا کھانا اپنے ہاتھوں سے پکا کر مستحقین میں تقسیم کرنے کے لیے الخدمت کو دیتے رہے ہیں۔ اسی طرح ایک صاحب نے رمضان بھر گوشت مستحقین تک پہنچانے کے لیے الخدمت کو 50 ہزار کلو گوشت فراہم کیا۔ انہوں نے بتایا کہ الخدمت نے لاک ڈاؤن کے دوران لاکھوں راشن ضرورت مندوں کے گھروں تک پہنچائے۔ سستی روٹی پراجیکٹ کے تحت شہر کے مختلف علاقوں میں تنور لگائے، جہاں 5 روپے کی روٹی فراہم کی گئی۔ شہر میں سحروافطار کا اہتمام کیا گیا۔ لوگوں کے گھروں تک پکا پکایا کھانا فراہم کیا، مساجد، امام بارگارہوں، مندروں اور چرچ میں جراثیم کش ادویہ کا اسپرے کیا گیا۔
ممبر گورننگ باڈی آرٹس کونسل پاکستان کراچی کاشف گرامی نے کہا کہ الخدمت بڑا کام کر رہی ہے مگر اس کی سرگرمیاں سوشل میڈیا پر نظر نہیں آتیں جس طرح آنی چاہئیں۔ لیکن گز شتہ تین ماہ سے الخدمت سوشل میڈیا پر چھا ئی ہوئی ہے اور اس کے کام بھی نظر آرہے ہیں۔ ممبر آرٹس کونسل عمران ایمو نے الخدمت کے کاموں کی تعریف کی اور اس کی خدمات کو خراج تحسین پیش کیا ۔
شکیل خان نے کہا کہ الخدمت وہ ادارہ ہے جس پر دنیا اعتماد کرتی ہے اور یہ اس کے کاموں کی وجہ سے ہے۔ اس نے ہر مشکل گھڑی میں ملک وقوم کی مدد کی ہے۔
سرفراز احمد نے کہا کہ کراچی والے فراخ دل ہیں۔ میں بچپن سے الخدمت کو ملک وقوم کی خدمت کرتے دیکھ رہا ہوں۔ لوگ اس پر اعتماد کر تے ہیں۔ کفالت یتامیٰ اچھا منصوبہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ یتیموں کی کفالت سنت رسول صلی اللہ علیہ وسلم ہے، یہ رفاقت رسول ؐ اور جنت کے حصول کا ذریعہ ہے۔ سرفراز احمد نے اعلان کیا کہ میں 10 یتیم بچوں کی کفالت کی ذمے داری لیتا ہوں۔ انہوں نے اسپورٹس سے متعلق گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ حالات سازگار ہوئے تو پاکستان کی ٹیم برطانیہ کا دورہ کرے گی۔ پاکستان کی باؤلنگ لائن مضبوط ہے۔ انہوںنے ٹیلی تھون کے مہمانوں کی فرمائش پر نعت بھی سنائی۔
ڈاکٹر اظہر چغتائی نے کہا صاف ستھرا رہیں۔ ہاتھ ملانے اور گلے ملنے سے اجتناب کریں۔ سوشل ڈیسٹنسنگ کریں یہ وقت اور حالات کا تقاضا ہے۔ انہوں نے کہا کہ الخدمت لوگوں کو صحت کی معیاری سہولتیں فراہم کر رہی ہے، لیب میں لوگوں کو ارزاں نرخوں پر ٹیسٹ کی سہولت میسر ہے جب کہ الخدمت اسپتالوں میں ادویہ پر 15 فیصد رعایت دی جا رہی ہے ۔
یوسی چیئرمین جمشید ٹاؤن جنید مکاتی نے کہا کہ الخدمت کے کارکن شہر کے گلی محلے میں موجود ہیں۔ الخدمت کے پاس رضا کاروں کی بڑی ٹیم ہے۔ فلائی اوور کے نیچے دستر خوان کا آغاز کیا تھا اب یہ دسترخوان اورنگی، کورنگی، پرانی سبزی منڈی اور لائنز ایریا سمیت شہر کے دیگر علاقوں میںقائم کیے جا چکے ہیں۔ یہ سلسلہ مخیرحضرات کے تعاون سے جاری ہے۔
نوید علی بیگ نے کہا کہ لوگ الخدمت پر اعتما د کرتے ہیں۔ الخدمت بے روزگار لوگوں کو ’’مواخات پر وگرام‘‘ کے تحت آسان اقساط پر بلا سودی چھوٹے قرضے فراہم کر رہی ہے تاکہ لوگ اپنے پیروں پر کھڑے ہو کر خاندان کی کفالت کر سکیں۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کا تعاون الخدمت پر اعتماد کا مظہر ہے۔ اس موقع پر نوید علی بیگ کے صاحبزادے نے لائیو کال کے ذریعے 5 لاکھ روپے عطیہ کا اعلان کیا ۔
ٹیلی تھون میں امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ صاحبِ ثروت اور اہلِ خیر افراد خواہ وہ پاکستان میں ہیں یا پاکستان سے باہر ان کا شکریہ ادا کرتے ہیں کہ انہوں نے الخدمت پر اپنے بھرپور اعتماد کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا کہ الخدمت ریاست کے وسائل کا مقابلہ نہیں کرسکتی۔ کراچی اللہ کے راستے میں دینے والوں کا شہر ہے۔ الخدمت کا پورا کام اہلِ خیر کے تعاون سے جاری رہتا ہے ۔ شہر بھرمیں سستی روٹی پراجیکٹ کو وسعت دے دیںگے جب کہ کورونا ٹیسٹنگ لیب کے ساتھ اسٹیٹ آف دی آرٹ لیب بنا رہے ہیں جہاںریڈیا لوجی اور پیتھالوجی کا شعبہ ہوگا۔ ایم آرآئی، سی ٹی اسکین سمیت دیگر مہنگے ٹیسٹ ارزاں نرخوں پر ہوں گے۔ حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ کورونا ٹیسٹنگ لیب پرڈھائی کروڑ لاگت آئے گی۔ الخدمت نے لاک ڈاؤن کی صورت حال اورمضان المبارک میں لوگوں کی بھرپور مدد کی ہے۔ میں الخدمت کے تمام کارکنوں اور رضاکاروں کو بہترین کام پر مبارک باد پیش کر تا ہوں اورصاحبِ ثروت افراد سے اپیل کرتا ہوں کہ الخدمت سے تعاون کریں۔

حصہ