میڈیا کی یلغار سے بچئیے

پاکستان جو اسلامی ملک ہے یہاں بسنے والے مسلمان اپنے رسم و رواج سے اپنے کلچر سے اپنی تہذیب سے شناخت کیے جاتے ہیں۔چند سالوں سے ملک کی ترقی کے نام پر اس مسلم ملک میں جس کلچر کو فروغ دیا جارہا ہے  اس پر ہر مسلمان مضطرب پریشان اور سراسیمہ ہے۔مغربی کلچر رسم ورواج اطوار لباس ہر جگہ عام ہوگے ہیں۔الیکٹرانک ،پرنٹ ،سوشل اور ڈیجیٹل میڈیاکے ذریعے معاشرتی قدروں کا پامال کیا جارہا ہے۔ہمارے چینلز کے ذریعے  مغربی اور ہندوانہ تہذیب کو رواج دیا جارہا ہے، نئی نسل کے ذہن میں ان کی اپنی روایات کلچر کی جگہ مغربی طرز زندگی کو آہستہ آہستہ انڈیلا جا رہا ہے۔کبھی mothers day کبھی womens day

اور یہاں تک کہ ویلنٹائن ڈے جیسا بے ہودہ دن جو نوجوانوں کے بگاڑ کی وجہ ہے اس دن ہر عمر  کے افراد یہ بھول جاتے ہیں کہ وہ مسلمان ہیں اور اسلام ایسی کسی خرافات کی اجازت نہیں دیتا، اپنے دین اور ایمان کو خطرے ڈال کر اللہ کی نا راضگی کا سبب بنتے ہیں۔

یہ سب ہمارے معاشرے میں ایک زہر کی طرح انڈیلا جانا یہودیوں کی سازش کا حصہ ہے جس کا شکار ہر مسلمان جانے انجانے  میں ہورہا ہے۔

اس صورتحال میں سمجھ بوجھ رکھنے والے، شعور رکھنے والے، علم رکھنے والے اور اقتدار و قوت رکھنے والے، ہر اس شخص کی ذمہ داری ہے جسے اللہ پاک نے ان صفات سے نوازا ہے اپنی صلاحیت اس ملک و قوم اور اپنے پیارے محبوب صلی اللہ علیہ وسلم اور اپنے ربّ کی خوشنودی کے لیے استعمال کرتے ہوئےاپنا دل اور جان بھی لگا دیں تاکہ ہمارا ملک دشمن کی سازش سے بچ کر اس کا مقا بلہ کرنے کے لیے مضبوط ہو سکے ۔

حصہ

جواب چھوڑ دیں