ممنوعہ فنڈنگ کیس میں الیکشن کمیشن کے فیصلے کے خلاف متفرق درخواست دائر

159

اسلام آباد:ممنوعہ فنڈنگ کیس میں الیکشن کمیشن کے فیصلے کے خلاف درخواست پر جلد اور روزانہ سماعت  کے لیے پاکستان تحریکِ انصاف نے اسلام آباد ہائی کورٹ میں متفرق درخواست دائر کر دی۔

متفرق درخواست میں کہا گیا ہے کہ کیس کی سماعت کے لیے 22 نومبر مقرر تھا تاہم یہ کیس اب ڈی لسٹ ہو گیا ہے، جبکہ الیکشن کمیشن کی رپورٹ کی بنیاد پر ایف آئی اے نے کارروائی شروع کر رکھی ہے۔

درخواست کے مطابق ایف آئی اے بغیر اختیارات کے پی ٹی آئی رہنمائوں اور ڈونرز کو ہراساں کر رہی ہے، بیرونِ ملک مقیم پاکستانیوں کو حکومتی دبائو پر پی ٹی آئی کے لیے فنڈنگ سے روکا جا رہا ہے۔

پی ٹی آئی کی متفرق درخواست میں کہا گیا ہے کہ اس طرح کے حربے جمہوریت پر براہ راست حملہ ہیں، پارٹی اور اس کے ممبران کے بنیادی حقوق کی خلاف ورزی ہورہی ہے۔ 

درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ جمہوریت کے تحفظ کے لیے پٹیشن میں اٹھائے گئے اہم سوالات کا فیصلہ کیا جائے، لارجر بینچ روزانہ کی بنیاد پر سماعت کر کے ہماری درخواست پر فیصلہ کرے۔

واضح رہے کہ اگست میں الیکشن کمیشن آف پاکستان نے پی ٹی آئی ممنوعہ فنڈنگ کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے کہا تھا کہ پی ٹی آئی نے ممنوعہ فنڈز لیے ہیں۔