اسمبلیوں کے  گلے سڑے نظام سے نکلنے کا فیصلہ خوش آئند ہے ، حلیم عادل

269

کراچی: تحریک انصاف کے مرکزی رہنما و قائد حزب اختلاف سندھ اسمبلی حلیم عادل نے کہا ہے کہ اسمبلیوں کے اس گلے سڑے نظام سے نکلنے کا فیصلہ خوش آئند ہے ہم خیرمقدم کرتے ہیں،ایسے ایوان میں بیٹھنے کا کیا فائدہ جہاں عوام کی بجائے چوروں کی بھلائی کے کام ہوتے ہو۔

حلیم عادل نے کہا کہ  جن اسمبلیوں میں قانون سازی ہوکے بڑے چور 12سو ارب لیکر بھاگ جائیں،سندھ اسمبلی میں تحریک انصاف کے 30 اراکین تھے جس میں چار لوٹے ہوگئے،26 اراکین اسمبلی ہیں ہم فوری استعفی دیں گے۔

 حلیم عادل نے کہا سندھ کے اندر 4 سال میں پبلک اکانٹس کمیٹی میں اپوزیشن کا کوئی میمبر نہیں مقرر کیا گیا،اپوزیشن لیڈر اگر5 گھنٹے تقریر کرتا ہے تو لاہور سے جاکر گرفتار کرلیا جاتا ہے، یہ وہ اسمبلی ہے جہاں 4 سال میں کسی بھی اسٹینڈنگ کمیٹی میں اپوزیشن کا میمبر شامل نہیں کیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ یہاں نہ پری بجٹ ڈسکشن اور پوسٹ بجٹ سیشن ہوتے ہیں،ایم پی ایز سے بجٹ سے پہلے نہ بعد کوئی مشاورت کی جاتی ہے،یہ اسمبلی تب کھلتی ہے جب انہوں نے اپنی چوری کرپشن کو لیگل کور دینا ہوتا ہے۔