حکومت الیکشن کیلیے سنجیدہ ہے تو بات چیت پر تیار ہیں، پی ٹی آئی

119
Judicial Commission

لاہور: تحریک انصاف نے ملکی معاشی صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملک میں سرمایہ کاری نہیں ہو رہی، کاروبار ختم ہو کر رہ گیا ہے۔ ملک کونئے الیکشن کی طرف لے جانا ہو گا۔ صدرمملکت کو پیغام دیا گیا مل بیٹھ کر بات کریں، اگرحکومت الیکشن میں سنجیدہ ہے تو تیار ہے۔

 میڈیا رپورٹس کے مطابق تحریک انصاف کے چیئر مین عمران خان کی زیر صدارت زمان پارک میں اجلاس ہوا، اجلاس میں سابق وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی، سابق وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر، سابق وفاقی وزیر اطلاعات فواد چودھری، سابق وزیر مملکت فرخ حبیب ، ڈاکٹر شیریں مزاری، اسد قیصر، علی زیدی، زلفی بخاری، پرویز خٹک، علی امین گنڈا پور، مراد سعید ،عامر کیانی، بابر اعوان، شفقت محمود، اعجاز چودھری، اعظم سواتی، شاہ فرمان، علی اعوان، شبلی فراز ، اسلم خان، افتخار درانی، کرنل (ر) عاصم شریک ہوئے۔

پارٹی ذرائع کے مطابق اجلاس کے دوران ملکی سیاسی صورتحال، حقیقی آزادی مارچ کے راولپنڈی مرحلے و دیگر معاملات پر گفتگو کی گئی جبکہ ملکی معاشی بحران اور صورتحال پر بھی غور کیا گیا۔

 اجلاس میں اسد عمر اور میں نے لانگ مارچ کے حوالے سے تجزیہ پیش کیا، روات میں مارچ پرامن طریقے سے اختتام ہوا ہے۔ ہمارے مارچ میں کسی جگہ بازاروں کو بند نہیں کیا گیا، ہمارا لانگ مارچ پرامن رہا، وزیرآباد میں عمران خان پر قاتلانہ حملہ ہوا ہے۔

 ہفتہ 26 نومبرکوعمران خان راولپنڈی جائیں گے، سردی کی وجہ سے 26 نومبر کو لوگوں کو بروقت نکلنا ہو گا۔اپنی بات کو جاری رکھتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جن کے پاس رہائش گاہ کا بندوبست ہے وہ 25 نومبر کو پہنچ جائیں، اقبال پارک راولپنڈی میں کارکنوں کی رہائش کا بندوبست کیا جا رہا ہے۔