کامن ویلتھ گیمزانتظامیہ کی غفلت، پاکستانی باکسر ایونٹ میں شرکت سے محروم

179
negligence

برمنگھم کامن ویلتھ گیمز انتظامیہ کی مبینہ غفلت کی وجہ سے پاکستان کے باکسر ذوہیب رشید فلائی ویٹ کیٹیگری ایونٹ میں شرکت سے محروم رہ گئے۔

کامن ویلتھ گیمز میں ذوہیب رشید کو فلائی ویٹ کیٹیگری میں شرکت کرنا تھی، اس کیٹیگری کا پہلا رائونڈ پیر کو ہوا۔ تین روز قبل جب ڈراز نکالے گئے تو اس میں ان کا نام شامل نہیں تھا۔

 پاکستان باکسنگ فیڈریشن(پی بی ایف)کے مطابق انہوں نے تمام چیزیں بروقت مہیا کردی تھیں، ٹیکنیکل ڈیلیگیٹ نے غلطی کی جس کی وجہ سے نام ڈراز میں شامل نہیں ہوا۔  باکسنگ فیڈریشن کے سیکریٹری کرنل ناصر تونگ کے مطابق تین دن تک انتظامیہ معاملے کو حل کرنے کے بجائے اس کو طول دیتی رہی اور مقابلوں کے عین وقت کہہ دیا گیا کہ ڈراز نکل چکے اب تبدیلی نہیں ہوسکتی۔

واضح رہے کہ فلائی ویٹ کیٹیگری میں 16 کے بجائے 15 باکسرز کو مین ڈراز میں شامل کیا گیا تھا جبکہ ایک باکسر کو بائی دے دیا گیا۔ سیکرٹری پی بی ایف کرنل ناصر نے کہا کہ کامن ویلتھ گیمز انتظامیہ نے ہمارے باکسر کے ساتھ ناانصافی کی، باکسر کو ذہنی اذیت ہوئی جس پر خاموش نہیں بیٹھیں گے۔

انہوں نے بتایا کہ معاملے پر کامن ویلتھ گیمز فیڈریشن اور آئبا سے احتجاج کے ساتھ ساتھ کھیلوں کی عالمی عدالت میں اذالے کا بھی مطالبہ کیا جائے گا۔ ذوہیب رشید ایشین جونیئر چیمپئن شپ کے برانز میڈلسٹ ہیں اور کرنل ناصر کے مطابق کامن ویلتھ گیمز میں پاکستان کو میڈل جتوانے کی پوزیشن میں بھی تھے۔