پختونخوا میں تجارت کو منظم کرنے کے لیے قانون سازی کا فیصلہ

140

پشاور: خیبر پختونخوا کی حکومت نے صوبے میں تجارت کو منظم کرنے کے لیے باقاعدہ قانون سازی کا فیصلہ کرلیا۔  اس سلسلے میں صوبائی اسمبلی نے تجارتی شماریات ایکٹ 2022ء کی منظوری دے دی ہے، جس کے مطابق صوبہ بھر کے تاجر اپنے کاروبار کی تفصیل دینے کے پابند ہوں گے۔

ایکٹ کے مسودے کے مطابق کاروبار کا لین دین،اشیاکی قیمتیں اور معلومات چھپانا اب جرم تصور ہوگا۔شماریاتی اتھارٹی کے اہلکار کسی بھی وقت کاروباری معلومات حاصل کرنے کے مجاز ہوں گے۔تاجر برادری مانگی گئی تفصیلات ادارے کوفراہم کرنے اور کاروبار کا ریکارڈ رکھنے کی پابند ہوگی۔

مسودے کے مطابق غلط بیانی یا معلومات کو چھپانے پر مجوزہ قانون کے تحت 6 دن تک قید یا5لاکھ روپے تک جرمانہ کیا جائے گا۔