مہنگائی کنٹرول کرنے کے لیے سونے کا سکہ متعارف

417

زمبابوے: زمبابوے نے بڑھتی ہوئی مہنگائی کو کنٹرول کرنے کے لیے سونے کا سکہ کرنسی کے طور پر متعارف کروادیا ہے۔

 غیر ملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق، زمبابوے کے مرکزی بنک نے منگل کے روز سونے کا سکہ کو مارکیٹ میں متعارف کروا دیا ہے۔زمبابوے میں سالانہ مہنگائی کی شرح 190 فیصد سے بھی زاہد ہوگئے ہے جس کے باعث رواں ماہ مرکزی بنک نے شرح سود میں 200 فیصد اضافہ کردیا ہے۔

 بین الاقوامی مارکیٹ ریٹ پر ہر سکے کی قیمت ایک اونس سونے کے علاوہ پیداواری لاگت کی 5% ہوگی۔ایک اونس کی قیمت تقریبا 1,724 ڈالر ہے۔زمبابوے کے مرکزی بینک کے گورنر، جان منگودیا نے کہاہے کہ مارکیٹ اور دکانوں میں سکے کے استعمال کو ممکن بنایا جائے گا۔سکے کو موسی-او-تونیا کے نام سے پکارا جائے گا جس کا مطلب ہے دھواں جو گرجتا ہے اور اس پر نشان زمبابوے اور زامبیا کی سرحد پر وکٹوریہ آبشار کے حوالے سے ہے۔اس سال زمبابوے ڈالر کی قدر میں کمی واقع ہوے۔