مختلف پولنگ اسٹیشنز پر کشیدگی،  الیکشن کمیشن کی جانب سے پولنگ کا عمل ملتوی کر دیا گیا

179
 مختلف پولنگ اسٹیشنز پر کشیدگی،  الیکشن کمیشن کی جانب سے پولنگ کا عمل ملتوی کر دیا گیا

نواب شاہ: سندھ کے پہلےبلدیاتی انتخابات میں تین پولنگ اسٹیشنز پر نامعلوم افراد کے حملے اور چند پر کشیدگی کے باعث الیکشن کمیشن کی جانب سے پولنگ کا عمل ملتوی کر دیا گیا۔

ترجمان الیکشن کمیشن کے مطابق چند وارڈز میں بیلٹ پیپرز پر امیدواروں کے نام اور  انتخابی نشان غلط شائع ہونے کی شکایات موصول ہوئی ہیں جس کے باعث متعلقہ وارڈز پر پولنگ ملتوی کر دی گئی۔

الیکشن کمیشن متعلقہ وارڈز میں دوبارہ الیکشن کے لیے نیا شیڈول جاری کرے گا، الیکشن کمیشن نے بیلٹ پیپرز پر امیدواروں کے نام اور انتخابی نشان غلط شائع ہونے کے معاملہ کی انکوائری کا حکم دیا ہے۔

الیکشن کمیشن نے بینظیرآباد میں تین پولنگ اسٹیشنز پر الیکشن میٹریل کھینچے جانے کے واقعہ پر بھی فوری نوٹس لیتے ہوئے ڈپٹی کمشنر اور ڈسٹرکٹ ریٹرننگ آفیسر کو فوری کارروائی کی ہدایت کر دی۔

الیکشن کمیشن نے ملزمان کی گرفتاری کا حکم دے دیا ہے۔نوابشاہ میں پولنگ اسٹیشن 23، 24 اور 26 پر نامعلوم مسلح افراد حملہ کرتے ہوئے پولنگ کا سامان اور بیلٹ پیپرز چھین کر فرار ہوگئے۔

تینوں پولنگ اسٹیشنز پر پولنگ کا عمل بند کر دیا گیا تھا جبکہ پولیس و رینجرز کے اہلکار طلب کر لیے گئے۔نواب شاہ کی ایچ ایم خواجہ ٹائون کے وارڈ 3 سے جنرل کونسلر کی نشست پر آزاد امیدوار راشد چانڈیو نے الیکشن کا بائیکاٹ کر دیا، آزاد امیدوار راشد چانڈیو اپنے حامی ووٹروں کے ساتھ نواب شاہ پریس کلب کے سامنے احتجاج دھرنا دے کر بیٹھ گئے۔

مسلم لیگ ن کے امیدوار یوسف شاہد آرائیں کا انتخابی نشان شیر بیلٹ پیپر سے غائب تھاجبکہ اسکی جگہ ایمرجنسی لائٹ کا نشان چھاپ دیا گیا۔

نوابشاہ کی یونین کمیٹی 6 وارڈ ایک نادر شاہ ڈسپنسری پولنگ اسٹیشن پر بھی پولنگ کا عمل بند کر دیا گیا ہے۔تحریک لبیک کے امیدوار کا نشان بھی تبدیل کر دیا گیا، کرین کے بجائے کوئن کا نشان چھاپ دیا گیا۔

تحریک لبیک کے کارکنوں نے پولنگ اسٹیشن پر پولنگ کا عمل بند کروا دیا، کارکنوں نے نشان تبدیل ہونے پر احتجاج اور شدید نعرے بازی کی۔سندھ میں جاری پہلے مرحلے کے بلدیاتی انتخابات کے دوران خیر پور کے وارڈ نمبر 16 کے پولنگ اسٹیشن نمبر 33 میں پولنگ کے عمل میں تاخیر ہوئی۔

پولنگ ایجنٹس کے مطابق مذکورہ پولنگ اسٹیشن میں دیے گئے بیلٹ پیپرز کی بکس میں سیریل نمبرز کا مسئلہ درپیش ہے، متعدد بیلٹ پیپرز کے سیریل نمبر غائب ہیں۔

تمام سیاسی جماعتوں کے پولنگ ایجنٹس کی جانب سے اس مسئلے کے باعث پولنگ شروع نہیں کرنے دی گئی ہے۔اس پولنگ اسٹیشن پر ووٹرز کافی تعداد میں پہنچ گئے جنہیں شدید گرمی میں قطار میں لگے رہنے کے باعث پریشانی کا سامنا کرنا پڑا۔