دادو ،محنت کش شعبان چانڈیو کے قاتلوں کو گرفتار نہیں کیا جارہا،والدہ

80

دادو ( نمائندہ جسارت ) سکرنڈ کے کچے کے علاقے جلبانی گاؤں میں 12 روز قبل رشتے داری کے تنازعے پر قتل ہونے والے محنت کش شعبان چانڈیو کے قاتلوں کی عدم گرفتاری کے خلاف مقتول کی والدہ قائم خاتون، بھائیوں عبددالجبار قر بھادر چانڈیو سمیت دیگر نے دادو پریس کلب میں پریس کانفرس کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہم تحصیل خیرپور ناتھن شاہ کے گاؤں راجو کا کنواں کے رہائشی ہیں 12 روز قبل سکرنڈ شہر کے کچے کے علاقے ماڑی تھانہ کی حدود فالسے کے باغ میں مزدوری کر رہے تھے کہ مخالفین حسین چانڈیو،خیر محمد چانڈیو،برکت چانڈیو اور شیر محمد عرف شیرو چانڈیو نے ہمارے ساتھی شعبان چانڈیو کو گولیاں مار کر قتل کردیا تھا ملزمان کے خلاف تھانہ ماڑی پر مقدمہ درج ہونے کے باوجود پولیس ملزمان کو گرفتار نہ کرسکی ہے الٹا مخالفین ہمیں گاؤں سے نقل مکانی کرنے کی دہمکیاں دے رہے ہیں ۔انہوں نے مزید کہا کہ مخالفین سے کافی وقت سے رشتے داری کا تنازع چل رہا ہے۔ انہوں نے آئی جی سندھ، ڈی آئی جی نواب شاہ،ڈی آئی جی حیدرآباد سمیت دیگر حکام سے مطالبہ کیا کہ فوری طور محنت کش شعبان چانڈیو کے قاتلوں کو گرفتار کرکے ہم سے انصاف کروایا جائے۔