او آئی سی نے مقبوضہ کشمیر میں غیر قانونی حلقہ بندیاں مسترد کردیں

49

اسلام آباد (صباح نیوز) اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی)کے آزاد مستقل انسانی حقوق کمیشن (آئی پی ایچ آر سی) نے بھارتی حکومت کی جانب سے مقبوضہ جموں و کشمیر میں غیر قانونی انتخابی حلقہ بندیوں کی مذمت کرتے ہوئے اسے بین الاقوامی انسانی حقوق اور انسانی قوانین کی صریح خلاف ورزی قرار د ے کر مسترد کر دیا ہے۔ آئی پی ایچ آر سی کے مطابق مقامی کشمیری سیاسی قیادت نے ہمیشہ مقبوضہ جموں و کشمیر میں انتخابی سیاست کو مسترد اور بائیکاٹ کیا ہے‘ غیر قانونی حلقہ بندیوں کا مقصد مقبوضہ جموں و کشمیر میں اپنی پسند کی کٹھ پتلی حکومت لانا اور مقامی مسلم آبادی کو اقلیت میں تبدیل کرنا ہے جبکہ ان کے ناقابل تنسیخ حق خود ارادیت کے استعمال میں رکاوٹ بھی ڈالنا ہے۔ کمیشن نے مزید کہا کہ یہ ظالمانہ اقدامات جنیوا کنونشن کے اصولوںکی صریح خلاف ورزی ہیں۔