کراچی :متاثرہ صحافیوں کو ہاکس بے بلاک 68 میں ری الاٹمنٹ کا فیصلہ

124

کراچی( اسٹاف رپورٹر)وزیر بلدیات سندھ سید ناصر حسین شاہ نے کراچی پریس کلب کے اراکین کو دیے گئے پلاٹوں میں سے 211 پلاٹوں کی الاٹمنٹ میں دشواریوں کے سبب ان پلاٹوں کی اسکیم 42 کے بلاک 68 میں ری الاٹمنٹ کا اعلان کر دیا ہے۔کراچی پریس کلب کے صدر فاضل جمیلی اور سیکرٹری محمد رضوان بھٹی نے جمعہ کو وزیر بلدیات سندھ سید ناصر حسین شاہ سے ملاقات کی اور ان کی جانب سے صحافیوں کے مسائل کے حل کے لیے کی جانے والی کوششوں کو سراہا۔ ملاقات میں پریس کلب کے وفد نے ہاکس ہاؤسنگ اسکیم میں 211 ممبران پریس کلب کو ری الاٹمنٹ کے لیے لیاری ڈیولپمنٹ اتھارٹی کا اجلاس بلانے پر شکریہ ادا کیا اور وزیر بلدیات سے ایل ڈی اے کی سمری کے مطابق متاثرین کو بلاک 68 میں ری سیٹل کرنے کی درخواست کی۔ وزیر بلدیات سندھ سید ناصر حسین شاہ نے دوران ملاقات سیکرٹری بلدیات نجم شاہ سے رابطہ کیا اور ہاکس بے میں متنازع پلاٹس کے مسئلے پر بات کی۔ متعلقہ حکام سے بات چیت کے بعد وزیر بلدیات سید ناصر حسین شاہ نے کراچی پریس کلب کے 211 ممبران کو ہاکس بے اسکیم 42 بلاک 68 ہی میں ری الاٹمنٹ کرنے کی منظوری دے دی ہے۔ملاقات میں وزیر بلدیات سندھ سید ناصر حسین شاہ نے پریس کلب کے وفد کو یقین دہانی کرائی کہ پلاٹس کی قرعہ اندازی بھی اسی ماہ کر دی جائے گی۔واضح رہے کہ رواں ماہ ایل ڈی اے کی گورننگ باڈی میں ری الاٹمنٹ کی منظوری پہلے ہی دے چکی ہے اور جمعہ کو سید ناصر حسین شاہ نے ہاکس بے اسکیم 42 بلاک 68 میں ری الاٹمنٹ کا فیصلہ کر کے اس درینہ مسئلے کو مکمل طور پر حل کر دیا۔ اس موقع پر وزیر بلدیات نے کہا کہ پارٹی چئیرمین بلاول بھٹو زرداری کی ہدایت کی روشنی میں صحافیوں کے مسائل کا حل پیپلز پارٹی قیادت کی ترجیحات میں شامل ہے۔انہوں نے کہا کہ چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے بھی صحافیوں کا یہ مسئلہ ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے کی ہدایت کی تھی۔ اس موقع پر کراچی پریس کلب کے صدر اور سیکرٹری نے اس دیرینہ مسئلے کے حل کے لیے حکومت سندھ کی جانب سے کی جانے والی کوششوں کو سراہا اور چئیرمین بلاول بھٹو زرداری، وزیر اعلی سندھ سید مراد علی شاہ ، وزیر بلدیات ناصر حسین شاہ ، سیکرٹری بلدیات نجم شاہ اور ڈی جی ایل ڈی اے اسحاق کھوڑو کا خصوصی شکریہ ادا کیا۔