فنڈز روکنے کی دھمکی ،الیکشن کمیشن کو مفلوج بنانے کی کوشش ہے،سعید غنی

92

اسلام آباد‘کراچی(آن لائن+اسٹاف ر پورٹر )سندھ کے وزیر اطلاعات و لیبر سعید غنی نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت الیکشن کمیشن کے فنڈز روکنے کی دھمکی دے کر اس ادارے کو مفلوج بنانا چاہتی ہے تاہم پیپلز پارٹی الیکشن کمیشن کے ساتھ کھڑی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔سعید غنی نے کہا کہ ڈسکہ اور سینیٹ کے الیکشن چوری کرنے والے صاف وشفاف الیکشن کی باتیں کر رہے ہیں ،چینی اور گندم کے ذمے داران کو سزا نہیں دی گئی بلکہ اس کی ذمے داری سندھ حکومت پر ڈالی جا رہی ہے، حفیظ شیخ کی طرح جلد شوکت ترین کو بھی قربانی کا بکرا بنایا جائے گا،پیپلزپارٹی اور(ن)لیگ نے10 برس میں جتنا قرض لیا تھا موجودہ پی ٹی آ ئی کی حکومت اس سے زیادہ قرض3برس میں لے چکی ہے،کراچی میں لوگوں کے گھر گرانے کے بجائے ان لوگوں کو سزا دی جائے جنہوں نے زمین الاٹ کی تھی،بلدیاتی الیکشن میں پی ٹی آئی کا ٹکٹ کوئی لینے کو تیار نہیں جبکہ سندھ کی مردم شماری پر ہمیں تحفظات ہیں ۔علاوہ ازیں گزشتہ شام اپنے کیمپ آفس میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے سعید غنی نے کہا کہ ایم کیو ایم نے کراچی کی مردم شماری پر سودے بازی کی جبکہ پیپلز پارٹی واحد جماعت ہے جو آخری دم تک لڑرہی ہے، کراچی کے عوام نے لسانی سیاست کی جتنی قیمت چکائی ہے اب مزید برداشت نہیں کریں گے، پیپلز پارٹی کراچی میں ایم کیو ایم یا ان کی بغل بچہ دیگر نام نہادجماعتوں کو کراچی میں لسانی سیاست کی کسی صورت اجازت نہیں دے گی،بلدیاتی قانون پر ہم نے اسمبلی میں بھی اپوزیشن جماعتوں کی ترامیم پر بات کرنے کا کہا تھا لیکن انہوں نے بائیکاٹ کیا اور آج بھی ہم اس پر بات کرنے کو تیار ہیں لیکن بلدیاتی قانون کی آڑ میں کسی کو لسانی سیاست کی اجازت نہیں دیں گے۔