برطرف سرکاری ملازمین کو حکم امتناع پر بحال کرنے کی استدعا مسترد

44

اسلام آباد (آن لائن)عدالت عظمیٰ نے  ایکٹ  2010 ء کے ذریعے بحال ہونے  والے سرکاری ملازمین کو برطرف کرنے سے متعلق عدالتی  فیصلے کیخلاف دائر نظر ثانی درخواستوں پر سماعت کے موقع پر برطرف ملازمین کو حکم امتناع پر بحال کرنے اور ملازمین کو فیصلے تک میڈیکل الائونس دینے کی استدعا مسترد قرار دیتے ہوے معاملے کی سماعت پیر 6 دسمبر تک ملتوی کر دی۔بدھ کو جسٹس عمر عطا بندیال کی سربراہی میں5 رکنی لارجر بینچ  نے معاملے پر سماعت کی۔دوران سماعت برطرف ملازمین کے وکیل رضا ربانی نے دلائل دیتے ہوئے موقف اپنایا کہ برطرف ملازمین بہت تنگدستی کا شکار ہیں ، عدالت ملازمین کی بحالی کے لیے عبوری طور پر فیصلہ معطل کرے۔جس پر جسٹس عمر عطا بندیال نے ریمارکس دیے کہ ہمیں بھی انکی مشکلات کا ادراک ہے، ہم نے قانونی تقاضوں کو پورا کرنا ہوتا ہے، ہم بھی چاہتے ہیں ملازمین بحال ہوں،ملازمین کی بحالی کا معاملہ آئندہ  پیر کو دیکھیں گے۔