صدر نے صحافیوں سے متعلق ایکٹ 2021 ء پر دستخط کردیئے

115

اسلام آباد(صباح نیوز)صدر مملکت عارف علوی نے پروٹیکشن آف جرنلسٹس اینڈ میڈیا پروفیشنل ایکٹ2021ء پر دستخط کردیے۔اس حوالے سے اسلام آباد میںتقریب ہوئی،جس میں صدرمملکت عارف علوی اور وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات فواد چودھری شریک ہوئے۔اس موقع پر صدر مملکت نے خطاب میں کہاکہ آج تاریخی قانون پر دستخط کیے گئے ہیں ، صحافی ہمیشہ دبا ئومیں کام کرتے رہے ہیں۔صدرمملکت کا کہنا تھا کہ جعلی خبروں کے ذریعے معاشرے میں افراتفری پھیلائی جاتی ہے ، افغانستان کوجھوٹی خبروں نے برباد کردیا، پاکستان میں فیک نیوزکی یلغار ہے۔قبل ازیں فوادچودھری نے خطاب میں کہا کہ صحافیوں کی ملازمت کا تحفظ یقینی بنارہے ہیں، ورکنگ جرنلسٹ کے حقوق کا تحفظ حکومت کی ذمے داری ہے،اس ایکٹ کا فائدہ مستحق لوگوں کو ہوگا۔انہوں نے کہا کہ ہم پہلی مرتبہ صحافیوں کے لیے ایک آزاد کمیشن لائے ہیں جو شکایات کا14روزکے اندر فیصلہ کرے گا،اس ایکٹ میں ورکنگ جرنلسٹس کو مالکان اور حکومتی افسران سے بھی تحفظ فراہم کیا گیا ہے،اس قانون کے ذریعے ہم نے ایک ایسا ماحول تشکیل دینے کی کوشش کی ہے کہ صحافیوں کو فرسٹ ورلڈ کے صحافیوں کی طرز پر تحفظ فراہم کیا جا سکے، اس ایکٹ کے تحت صحافی کی ایک جامع تعریف کرنے کی کوشش کی گئی ہے،اس کا فائدہ ان ورکنگ جرنلسٹس کو ہو گا، جو واقعی کام کر رہے ہیں۔وفاقی وزیرانسانی حقوق شیریں مزاری نے کہاکہ بل بنانے میں صحافتی تنظیموں نے تعاون کیا، پہلی بار صحافیوں کے لیے آزادانہ کمیشن بنے گا، بل میں تمام میڈیا ورکرز کے تحفظ کو یقینی بنایا ہے ، جرنلسٹ کی ویلفیئر بھی موجودہ بل میں شامل ہے، میڈیا ورکرز کو فیلڈ میں بھیجنے سے قبل تحفظ یقینی بنانا ہو گا، میڈیا ہائوسز ورکرز کو ٹریننگ دینے کے پابند ہوںگے، کمیشن آزاد ہو گا، صحافی بھی شامل ہوںگے، وزارت اطلاعات بھی کمیشن میں شامل ہو گی،بل میں ایسی کوئی شق نہیں جس پر بحث ہو سکے ،پروٹیکشن اور سورس کو بھی تحفظ دیا گیا ہے۔ ادھرسینیٹر فیصل جاوید نے بل کی منظوری پر مبارکبادی اورکہا کہ آج کا دن ملک میں میڈیا آزادی کے لیے بڑی کامیابی ہے۔