بلدیاتی انتخابات کراچی میں بھی فوری کروائے جائیں،حافظ نعیم

166

کراچی:امیرجماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن کا کہنا ہے کہ الیکشن کمیشن کی جانب سے خیبر پختونخواہ میں بلدیاتی انتخابات کروانے کافیصلہ خوش آئند ہے، الیکشن کمیشن خیبر پختونخواہ کی طرح دیگر صوبوں بالخصوص کراچی میں بھی فوری بلدیاتی انتخابات کا اعلان کرے۔

حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ  ملک میں طویل عرصے سے تمام صوبوں میں بلدیاتی نظام عملاًمعطل ہے، جس کی وجہ سے شہری شدید مشکلات کا شکار ہیں، تین کروڑ سے زائد عوام کے بے شمار مسائل کے حل کے لیے ضرور ی ہے کہ کراچی میں بااختیار شہری حکومت کے قیام کو یقینی بنایا جائے۔

امیر جماعت اسلامی کراچی کا کہنا تھا کہ  میئر کا انتخاب براہ راست کیا جائے اور اس کے لیے موجودہ بلدیاتی ایکٹ میں تبدیلی کی جائے، پوراشہرتباہ حال ہے ، عوام بنیادی ضروریات سے محروم ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ کراچی میٹرو پولیٹن شہر ہے جوکہ ملک کو 47فیصد ٹیکس کی مد میں ادا کرتا ہے لیکن اس کے باوجود کراچی کے ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک کیا جارہا ہے ،کراچی میں صفائی ستھرائی کا کوئی موثر نظام موجود نہیں ہے۔

حافظ نعیم الرحمن کا کہنا تھا کہ  سڑکیں خستہ حال ہیں ،شہری پینے کے صاف پانی سے محروم ہیں ،کراچی میں ضلعی ایڈمنسٹریٹربھی کراچی کے مسائل سے ہی واقف نہیں ہیں اس صورتحال کا واحد حل فوری بلدیاتی انتخابات ہیں۔

انہوں نے مزیدکہاکہ بلدیاتی انتخابات کے حوالے سے معلوم ہوتا ہے کہ پی ٹی آئی نے اپنے اکثریتی صوبوں میں اور سندھ میں پیپلزپارٹی نے بلدیاتی انتخابات نہ کروانے پر اتفاق کیا ہوا ہے ، پیپلزپارٹی کراچی دشمنی میں شہر میں ایڈمنسٹریٹر کے ذریعے کراچی کو فتح کرنے کی کوششوں میں ہے۔

ایڈمنسٹریٹر دعوے،اعلانات اور دورے تو مسلسل کررہے ہیں لیکن مسائل جوں کے توں ہیں اور یہ صورتحال اس وقت تک رہے گی جب تک کراچی میں بااختیار شہری حکومت قائم نہیں ہوگی۔