جیکب آباد، بے امنی کیخلاف انجمن تاجران و ہندو پنچائت کا احتجاج

108

جیکب آباد(نمائندہ جسارت) جیکب آباد میں بڑھتی ہوئی بے امنی پر چیمبر آف کامرس ،انجمن تاجران اور ہندو پنچائت کا مشترکہ اجلاس،ایس ایس پی کی زیاتیوں کے خلاف احتجاجی تحریک چلانے کا فیصلہ ،ہندو کمیونٹی کو ٹارگٹ کیا جارہا ہے شہریوں پر منشیات کے مقدمے کرکے تنگ کیا جا رہا ہے پولیس ڈیوٹی کے بجائے سیاست کررہی ہے ،احمد علی بروہی،لعل چند سیتلانی۔ تفصیلات کے مطابق جیکب آباد میںبڑھتی ہوئی بے امنی پر چیمبر آف کامرس کا ہنگامی انجمن تاجران اور ہندو پنچائت کا مشترکہ اجلاس چیمبر آف کامرس کے صدر احمد علی بروہی کی صدارت میں نجی ہوٹل میں ہوا جس میں تمام ہندو پنچائت کے صدر لعل چند سیتلانی ،صرافہ یونین کے صدر جمال الدین لکھن ،حاجی یوسف میمن، فوٹو اسٹیٹ کے صدر ،کپڑا مارکیٹ کے ہوند راج بیبو مل ،الیکٹرک یونین کے حافظ میر محمد بنگلانی ،سریچند، میڈیکل یونین کے روشن گورکھا، دیو آنند ، موبائل یونین کے شمس سومرو ،راجا وشال ،کھاد مارکیٹ کے منظور پہنور ،پی پی (ش ب ) کے نور محمد منجھو او ر دیگر نے شرکت کی ۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پولیس کی جانب سے ہندو کمیونٹی کو ٹارگٹ کیا جا رہا ہے ۔ایس ایس پی کے کہنے پر ستیشن کمار ،انیل ،آصف پٹھان سمیت 8شہریوں پر منشیات کے جھوٹے مقدمات درج کیے گئے ہیںشہری میں چوری اور رہزنی کی وارداتیں معمول بن گئی ہیںجس کے باعث شہری سخت پریشان ہیں،نریش کمار اور انیل کمار سے ہونے والی لاکھوں روپے کی ڈکیتی کی واردات میں مسروقہ رقم برآمد کرنے کے بعد پولیس نے ہڑپ کر لی ہے،پولیس کی جانب سے کاروباری افراد پر جھوٹے مقدمات درج کرکے بلیک میل کیا جا رہا ہے۔ایس ایس پی کہتے ہیںپی ٹی آئی کو ووٹ کیوں دیا پولیس کی ڈیوٹی شہریوں کا تحفظ ہے سیاست نہیں،ایس ایس پی جیکب آباد سیاست کررہے ہیں اس لیے انہیں فی الفور ہٹایا جائے ۔اس سلسلے میںرابطے پر چیمبر آف کامرس کے صدر احمد علی بروہی نے ڈی آئی جی لاڑکانہ مظہر نواز شیخ سے ملاقات کرکے پولیس کی زیادتیوں اور بے امنی کے واقعات کے متعلق آگاہ کیا ہے اور شہریوں پر ہونے والے منشیات کے جھوٹے مقدمات کی تفصیل دی ہے جس پر ڈی آئی جی نے تحقیقات کا حکم دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایس ایس پی کے خلاف ہفتے کو پریس کانفرنس کرکے تحریک کا آغا زکیا جائے گا۔