ربیع الاول کا تقاضا ہے کہ نظام مصطفیﷺ کے نفاذ کیلئے جدوجہد کی جائے، سراج الحق

233

لاہور:امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق کا کہنا ہے کہ ربیع الاول کا تقاضا ہے کہ حضور ﷺ کے پیغام کو دنیا کے کونے کونے میں پہنچایاجائے اورملک میں نظام مصطفیﷺ کے نفاذ کیلئے جدوجہد کی جائے۔

سراج الحق نے کہا کہ کرپشن ،بدعنوانی اور رشوت ستانی جیسے جرائم کے مکمل خاتمہ کیلئے اسلامی تعلیمات کی روشنی میں فیصلے کرنا ہونگے، حضرت محمد ﷺپوری کائنات کیلئے رحمت تھے ،ان کا پیغام انسانیت کو درپیش مسائل کا حل ہے۔

امیر جماعت اسلامی پاکستان کا کہنا ہے کہ ملک و قوم کو درپیش تمام مسائل کا حل اسلامی نظام کے نفاذ میں ہے ۔ اسلامی نظام کے قیام اور مسائل کے حل کے لیے غلبہ دین کی جدوجہد کو تیز کرنے کی ضرورت ہے۔پاکستان کو اللہ تعالیٰ نے بے پناہ وسائل اور جفاکش و محنتی لوگوں سے نوازا ہے ۔

سراج الحق نے مزید کہا کہ اللہ کے نظام سے روگردانی کی وجہ سے آج ملک میں بھوک، غربت اور بے روزگاری ہے ، آزادی کے بعد بھی ہمارا عدالتی ، تعلیمی اور سیاسی نظام وہی ہے جو انگریز چھوڑ کر گیا تھاجب تک اس فرسودہ اور ظالمانہ نظام کو نہیں بدلا جاتا ملک و قوم اسی طرح مسائل کی دلدل میں پھنسے رہیں گے ۔

انہوں نے مزید کہا کہ  نوجوانوں کو ظلم و جبر کے مسلط نظام کو جڑ سے اکھاڑ پھینکنے کیلئے اٹھنا ہوگا، ہماری کامیابی اور ترقی کی ضمانت نظام مصطفی ﷺ کے نفاذ میں ہے ،جماعت اسلامی اسی بابرکت نظام کے نفاذ کی جدوجہد کررہی ہے۔

سراج الحق کا کہنا تھا کہ حکومت کی غریب کش پالیسیوں کے خلا ف تحریک کا آغاز کردیا۔ 31اکتوبر کو اسلام آباد میں ہزاروں بے روزگار نوجوانوں کولائیں گے۔بے روزگار نوجوانوں کا احتجا ج ، حکومت مخالف تحریک کا نقطہ آغاز ہوگا۔ عوام 31 اکتو بر کو ڈی چوک پہنچیں ، آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے ۔