بجلی کی قیمت میں اضافہ ظلم ہے، سراج الحق

144

لاہور:امیر جماعت اسلامی سراج الحق کا کہنا  ہے کہ بجلی کی قیمت میں ڈیڑھ روپے فی یونٹ اضافہ ظلم ہے، آئی ایم ایف کے حکم پر بجلی پر سبسڈی عملاً ختم کر دی گئی، ملکی تاریخ میں ایسا پہلی بارہوا ہے،  پاکستان کے مسائل کا حل ظالم اشرافیہ کے نجات میں ہے۔

سراج الحق نے کہا کہ ملک پر 35سال جرنیلوں نے اور بقیہ عرصہ جرنیلوں کے پروردہ لوگوں نے حکومت کی، اس اسٹیٹس کو بحال رکھنے کے لیے حکمران اشرافیہ ہمیشہ ایک پیج پر ہوتی ہے، جس ملک کی خاطر کروڑوں اسلامیانِ برصغیر نے قربانیاں دیں وہاں ظالمانہ نظام نافذ ہے۔

امیر جماعت اسلامی پاکستان  کا کہنا تھا کہ  مغل شہزادوں سے نجات کا وقت آ گیا ہے،  پی ٹی آئی نے قوم کے تین سال ضائع کیے،  پارلیمنٹ میں ایک قانون بھی عوام کے لیے نہیں بنا، معیشت کی تباہی کے بعد ملک کی نظریاتی اساس سے کھیلا جا رہا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ قوم کو اسلامی انقلاب کے لیے جماعت اسلامی کی جمہوری اور پرامن جدوجہد کا ساتھ دینا ہو گا۔ نبی کی رحمت کا اسوہ پوری انسانیت کو درپیش مسائل کا حل ہے، ضرورت اس امر کی ہے کہ اب ملک میں نظام مصطفی کے نفاذ کے لیے عملی جدوجہد کا آغاز کیا جائے۔

سراج الحق نے  مزید کہا کہ عشق رسول کا تقاضا ہے کہ اس ملک میں رسول پاک کا دیا گیا نظام نافذ ہو، گزشتہ سات دہائیوں سے سازش کے ذریعے ملک کو اسلامی نظام سے محروم رکھا گیا، اب ہمیں مزید وقت ضائع نہیں کرنا چاہیے۔

امیر جماعت اسلامی کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی کی حکومت نے مدینہ کی ریاست کا نام لے کر عوام سے جھوٹ بولا،  موجودہ حکمرانوں میں اہلیت نہیں کہ ملک کو مدینہ کی ریاست میں تبدیل کر سکیں۔