میڈیکل میں داخلہ لینے والے امیدواروں کا نتیجہ تبدیل ہو نے کا سلسلہ جاری

355

 ( رپورٹ: حماد حسین) پاکستان میڈیکل کمیشن کی نااہلی،ایک لاکھ سے زائد طلباء طلباء کا مستقبل تاریک ہو گیا،میڈیکل جامعات میں داخلہ لینے والے امیدواروں کا نتیجہ تاحال مسلسل تبدیل ہو رہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق میڈیکل جامعات میں داخلہ لینے والے امیدواروں کا نتیجہ پورٹل پر کبھی کامیاب تو کبھی ناکام قرار دیا جاتا ہے، جس کی وجہ سے والدین اور طلباء تذبذب کا شکار ہوگئے ہیں۔

پاکستان میڈیکل کمیشن کے تحت میڈیکل جامعات کے داخلے ٹیسٹ میں ملک بھر سے 64 فیصد طلباء کو ناکام قرار دیا گیا، ایم ڈی کیٹ داخلہ ٹیسٹ میں ملک بھر سے کامیابی کا تناسب 35.4 فیصد رہا۔

پی ایم سی میڈیکل جامعات داخلہ ٹیسٹ میں ایک لاکھ 94 ہزار ایک سو 33 امیدواروں میں سے ایک لاکھ 25 ہزار 4 سو 53 طلباء کو ناکام قرار دیا گیاجبکہ ملک بھر سے 68 ہزار 680 طلباء کو کامیاب قرار دیا گیاہے۔

پنجاب سے 42.84 فیصد،سندھ سے 22.37 فیصد،خیبر پختون خواہ سے 29.32 فیصد،بلوچستان سے 21.12 فیصد,اسلام آباد سے 46.26 فیصد،گلگت سے 35.21 فیصد جبکہ آزاد جموں کشمیر سے 38.13 طلباء کو کامیاب قرار دیا گیا، سندھ کے 34 ہزار سے زائد امیدواروں میں 7 ہزار 7 سو 97 امیدواروں کو کامیاب قرار دیا گیا۔