۔ 46 فیصد آبادی بلند فشار خون کے مرض میں مبتلا ہوچکی ہے‘طبی ماہرین

57

کراچی( اسٹاف رپورٹر ) پاکستان میں نوجوان افراد میں ہائی بلڈ پریشر کا مرض بڑھتا جارہا ہے اور 2020 ء کے ڈیٹا کے مطابق ملک کی 46 فیصد آبادی ہائپر ٹینشن یا بلند فشار خون کے مرض میں مبتلا ہوچکی ہے۔ان خیالات کا اظہار پاکستان ہائپرٹنشن لیگ سے وابستہ ماہرین امراض قلب نے گزشتہ روز کراچی پریس کلب میں نیوز کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر پاکستان ہائپرٹینشن لیگ کے سیکرٹری جنرل پروفیسر محمد اسحاق، ڈاؤ یونیورسٹی کے پروفیسر آف کارڈیالوجی ڈاکٹر نواز لاشاری، ڈائریکٹر ہیلتھ کراچی ڈاکٹر اکرم سلطان، پروفیسر منصور احمد، پروفیسر فیروز میمن، پروفیسر خالدہ سومرو اور پروفیسر عبد الرشید خان نے خطاب کیا۔ پاکستان ہائپرٹینشن لیگ کے جنرل سیکرٹری پروفیسر محمد اسحاق کا کہنا تھا کہ بلڈ پریشر کا مرض دنیا کی سب سے بڑی بیماری ہے، جس کے نتیجے میں دل کے دورے سے اموات، گردوں کا فیل ہو جانا، اندھا پن اور فالج جیسے مرض لاحق ہوتے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ آج سے کراچی میں تین روزہ چوبیسویں پی ایچ ایل کانفرنس شروع ہو رہی ہے جس کا افتتاح وزیر اعلیٰ سندھ کریں گے، کانفرنس سے دنیا بھر کے 80 سے زائد ماہرین صحت خطاب کریں گے۔