سیسی میں آج 53 افراد کو ملازمتیں دی گئیں‘سعید غنی

60

کراچی (اسٹاف رپورٹر) وزیر اطلاعات و محنت سندھ و چیئرمین سندھ سوشل سیکورٹی انسٹیٹیوشن (سیسی) سعید غنی نے کہا ہے کہ سیسی میں آج 53 جبکہ اب تک 126 ایسے افراد کو ملازمتیں دی گئی ہیں، جن کے والد یا والدہ دوران ملازمت وفات پاگئے تھے اور یہ پیپلز پارٹی کے منشور کا حصہ ہے کہ روزگار فراہم کیا جائے۔ بینظیر مزدور کارڈ کے ذریعے نہ صرف ہم سیسی کے نیٹ ورک سے باہر مزدوروں کو اس نیٹ ورک میں لاسکیں گے بلکہ ہم ان محنت کشوں اور مزدوروں کے بچوں کو اچھی تعلیم اور صحت کی فراہمی کو بھی یقینی بنا سکیں گے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعہ کے روز سیسی کے مرکزی دفتر میں ڈیزیز کوٹہ کے مزید 53 ملازمین کو ان کی ملازمتوں کے تقررنامہ دینے کی تقریب سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا۔ تقریب سے پیپلز لیبر بیورو سندھ کے صدر حبیب جنیدی، رکن گورننگ باڈی سیسی کرامت، سی بی اے سیسی کے صدر اعجاز احمد عباسی، جنرل سیکرٹری احمد فراز سمیجو، سنیئر نائب صدر شبیر علی، نائب صدر عطا مہراور انفارمیشن سیکرٹری عطا اللہ لاسی سمیت دیگر نے بھی خطاب کیا۔ انہوں نے کہا کہ بدقسمتی سے ہمارے ملک میں یہ تاثر عام ہے کہ جو لوگ یونین میں ہوتے ہیں وہ کام نہیں کرتے، ہمیں اس تاثر کو اب ختم کرنا ہوگا اور میں سیسی کے ملازمین اور بالخصوص نئے آنے والے ملازمین سے امید کرتا ہوں کہ وہ اس تاثر کو ختم کرنے میں اپنا کردار ادا کریں گے اوراپنے ادارے کی ترقی کے لیے افسران سے زیادہ کام کرکے اس بات کو ثابت کریں گے کہ یونین میں ہونے کے باوجود بھی وہ زیادہ کام کرتے ہیں۔