کل جان بچانے کی تربیت کا دن منایا جائے گا،پیما

64

کراچی (اسٹاف رپورٹر)دنیا بھر کی طرح پاکستان میں 25؍ستمبر کو ’’لائف سیورز ڈے‘‘ جان بچانے کی تربیت کا دن منایا جا رہا ہے۔ اس دن ڈاکٹرز کی جانب سے عام شہریوں کو ہنگامی حالات میں کسی کی جان بچانے کی عملی تربیت دی جاتی ہے۔ اس سلسلے میں پاکستان اسلامک میڈیکل ایسوسی ایشن (پیما) کے زیر اہتمام 48 شہروں کی 189سے زائد مساجد میں ’’لائف سیورز ٹریننگ پروگرامات‘‘ منعقد کیے جائیں گے۔ پیما ویمن ونگ اسلام آباد سمیت کئی شہروں میں خواتین کے لیے بھی یہ ٹریننگ پروگرام منعقد کر رہی ہے۔ پیما میڈیکل ریلیف کے ڈائریکٹر ڈاکٹر محمد افضل میاں نے کہا کہ عام شہریوں کو جان بچانے کی تربیت دینے کا مقصد دل کے دورے اور دل کے دیگر امراض کے باعث ہونے والی شرح اموات میں کمی لانا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ طبی اصطلاح میں اس ٹریننگ کو CPRکہا جاتا ہے ،جومریض کو اُس وقت دیا جاتا ہے جب اچانک اس کے دل کی دھڑکن بند ہو جائے یا سانس لینے میں رکاوٹ کا سامنا ہو۔پاکستان میں دل کا دورہ پڑنے کے زیادہ تر واقعات گھروں، دفاتر یا راہ چلتے ہوتے ہیں۔ اگر ہر کوئی CPR کی ٹریننگ حاصل کر لے تو وہ مریض تک ایمبولینس یا دوسری طبی مدد پہنچنے سے قبل اس کی سانس کی بحالی اور دل کی دھڑکن رواں رکھنے میں مددگار بن سکتا ہے اور مریض کی جان بچ سکتی ہے۔