افغانستان سے نکلنے کیلیے سب کو پاکستان یاد آیا ، شعیب اختر

159

لاہور (جسارت نیوز)سابق فاسٹ بولر شعیب اختر نے انگلینڈ کی جانب سے پاکستان کا دورہ منسوخ کرنے پرانگلینڈ بورڈ پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ دورہ ختم کرنے سے پہلے پاکستان آکر حالات تو دیکھ لیتے۔نیوزی لینڈ کی جانب سے یکطرفہ طور پر دورہ منسوخ کیے جانے کے بعد گزشتہ روز انگلینڈ کرکٹ بورڈ نے بھی دورہ پاکستان منسوخ کردیا۔اس حوالے سے قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان شعیب ملک نیانگلینڈ کرکٹ بورڈ کی جانب سے پاکستان کا دورہ منسوخ کیے جانے پر دکھ کا اظہار کیا۔ان کا کہنا تھا کہ نیوزی لینڈ کے ساتھ ہی انہوں نے ذہن بنا لیا تھا کہ وہ پاکستان نہیں آئیں گے، لیکن جب ان کو افغانستان سے نکلنے کیلیے سہارے کی ضرورت پڑتی ہے تو انہیں پاکستان نظر آتا ہے ۔ شعیب اختر کا کہنا تھا کہ جب کورونا کے دنوں میں جب آپ کو ہماری ضرورت پڑتی ہے تو ہماری منتیں کرتے ہیں کہ انگلینڈ کا دورہ کرلیں،ان کا کہنا تھا کہ یہ طے پاچکا تھاکہ پاکستان کا بیانیہ خراب کرنا ہے اور کردیا ہے، یہ سب آپس میں ملے ہوئے ہیں، پہلے دیکھ تو لیں پاکستان میں حالات کیا ہیں؟شعیب اختر کا کہنا تھاکہ میری خواہش تھی کہ کاش انگلینڈ پاکستان آجائے اوریہ بیانیہ دے سکیں کہ پاکستان محفوظ ملک ہے لیکن انگلینڈ نے نیوزی لینڈ کا ساتھ دیا۔انہوں نے واضح الفاظ میں کہا کہ اگر میں چیئر مین پی سی بی ہوتا تو میں یہی کہتا کہ ہم نے بھی نیوزی لینڈ اور انگلینڈ سے کوئی سیریز نہیں کھیلنی۔