حکومت نے سی پیک پر تین سال سے کام ٹھپ ہونے کا اعتراف کرلیا

280

اسلام آباد: وزیراعظم کے معاون خصوصی سی پیک خالد منصور کا کہنا ہے کہ چینی کمپنیاں سی پیک پر کام کی رفتار سے مطمئن نہیں،اب چائینز کا اعتماد بحال کر رہے ہیں جلد سی پیک خطے کی ترقی کا اہم جزو ہوگا۔

سینیٹر سلیم مانڈوی والا کی زیر صدارت سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے ترقی و منصوبہ بندی کا اجلاس منعقد ہوا،  اجلاس میں سینٹر دنیش کمار سمیت دیگر وفاقی وزراء نے بھی شرکت کی،جس میں سلیم مانڈی والا نے کہا کہ چینی سفیر کے مطابق 3 سال میں سی پیک کا بیڑاغرق کردیا گیا۔

خالد منصور نے سلیم مانڈی والا کی بات کی تائید کرتے ہوئے کہا کہ سی پیک کے تحت سماجی ترقی کے اب تک 4 منصوبے مکمل ہوچکے ہیں، سی پیک کے تحت بجلی کے 5320 میگاواٹ کے منصوبے مکمل کئے گئے ہیں۔

سینٹر دنیش کمار نے کہا کہ بلوچستان کے حوالے سے تعصب کی عینک اتار کر بھی دیکھیں تو گوادر میں کوئی منصوبہ نہیں ہے، جب سے سی پیک شروع ہوا ہے بلوچستان کو کچھ نہیں ملاسی پیک منصوبوں میں بلوچستان کے ساتھ زیادتی ہورہی ہے۔