سوڈان : طوفانی بارش اور سیلاب سے 84 افراد جاں بحق

88
سوڈان: بارش اور سیلاب سے شہریوں کے کچے مکان اور جھونپڑیاں تباہ ہوگئی ہیں

خرطوم (انٹرنیشنل ڈیسک) سوڈان میں رواں سال بارش اور سیلاب کے باعث 84 افراد اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے، جب کہ 67 زخمی ہوئے۔ شہری دفاع کے ترجمان عبدالجلیل عبدالرحیم نے اپنے بیان میں بتایا کہ بارش کا موسم شروع ہونے کے بعد سے سوڈان کے 11صوبوں میں ہونے والی اکثر اموات ڈوبنے، کرنٹ لگنے اور دیوار گرنے سے ہوئیں۔ ترجمان کے مطابق سیلاب نے ملک بھر میں تقریبا 8ہزار 400 گھروں کو تباہ کر دیا ہے اور 72 ہزار سے زیادہ گھروں کو نقصان پہنچایا۔ اقوام متحدہ کی رپورٹ کے مطابق جولائی کے بعد سے سوڈان میں ایک لاکھ سے زیادہ افراد بارش اور سیلاب سے متاثر ہوئے۔ گزشتہ ہفتے جاری ہونے والی ایک رپورٹ میں اقوام متحدہ نے بتایا تھا کہ سوڈان کے جنوب میں تقریباً50 دیہات زیر آب آ نے کے نتیجے میں 65 ہزار افراد نے نقل مکانی کی۔ ان افراد میں جنوبی سوڈان کے وہ پناہ گزین بھی شامل ہیں، جن کے خیمے پانی میں ڈوب گئے۔ سیلاب کے باعث زرعی اراضی کو شدید نقصان پہنچا اور کھڑی فصلیں تباہ ہوگئیں۔ یاد رہے کہ گزشتہ برس طوفانی بارش کے باعث سوڈانی حکام نے 3ماہ کے لیے ہنگامی حالت کا اعلان کردیا تھا۔ اس دوران ساڑھے 6 لاکھ افراد کو نقصان پہنچا اور ایک لاکھ سے زیادہ گھر متاثر ہوئے تھے۔