‘طالبان نے انخلا کا عمل روکنے کی کوشش نہیں کی’

254

ترجمان پینٹاگون جان کربی نے کہا ہے کہ انخلا کے دوران طالبان سے کسی قسم کی جھڑپیں نہیں ہوئیں، طالبان نے انخلا کا عمل روکنے کی کوشش نہیں کی۔

نیوز بریفنگ میں جان کربی نے کہا کہ محفوظ انخلا کے لیے کابل پر امریکی جنگی جہازوں کی پروازیں جاری ہیں تاہم طیارے نچلی پروازیں نہیں کر رہے، کابل ایئر پورٹ پر امریکی فوجیوں کی تعداد 5 ہزار 200 ہے۔

ترجمان نے بتایا کہ امریکی فورسز نے ایئرپورٹ کے احاطے کے باہر سے کچھ امریکی شہریوں کو فضائی ذریعے سے اندر پہنچانے میں مدد فراہم کی۔

ان کا کہنا تھا کہ ضرورت پڑی تو کابل ایئرپورٹ سے باہر جاکر امریکی شہریوں کی مدد کریں گےامریکا یہ صلاحیت رکھتا ہے کہ اپنے شہریوں کی ہرصورت مدد کرےاور اس معاملے میں کسی قسم کی کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی۔

طالبان نے امریکا کو یقین دہانی کرائی ہے کہ وہ 31 اگست کے بعد بھی بیرون ملک جانے کے خواہش مند افراد کو نہیں روکیں گے۔

طالبان نے لوگوں کو ملک چھوڑنے سے روکنے کی خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ کابل ایئرپورٹ پر لوگوں کو ملک چھوڑنے سے نہیں روک رہے صرف ان لوگوں کو روکا جا رہاہے جن کے پاس سفری دستاویزات نہیں۔