حکومت نے قربانی کی آلائشیں ٹھکانے لگانے کی پالیسی وضع کرلی

57

کراچی (اسٹاف رپورٹر)قربانی کی آلائشوں کو بروقت اور موثر انداز سے ٹھکانے لگانے کے لیے حکومت سندھ نے پالیسی وضع کرلی ہے۔ سیکرٹری بلدیات انجینئر سید نجم احمد شاہ نے کہا ہے کہ عید الاضحی کے دوران متوقع بارشوں کے پیش نظر محکمہ بلدیات سندھ نے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کا نفاذ کردیا ہے جس کے تحت تمام اضلاع کی حدود میں قربان شدہ جانوروں کی آلائشوں کو سندھ سالڈ ویسٹ مینجمنٹ بورڈ کا ادارہ باقاعدگی سے جمع کرتا رہے گا او ر بعد ازاں مختص کردہ 85مقامات سے لینڈ فل سائٹس پر منتقل کرے گا۔ نجم احمد شاہ کے مطابق قربان گاہوں، گلی محلوں اور دیگر مقامات سے جمع کردہ آلائشیں ایس او پیز کے تحت جام چاکرو، گوندپاس اور شرافی گوٹھ لینڈ فل سائٹس تک منتقل کی جائیں گی جن کو بعد ازاں سائنٹفک بنیادوں پر تلف کرنے کا انتظام کیا جائے گا۔ سیکرٹری بلدیات سندھ نے بتایا کہ ڈسٹرکٹ ساؤتھ میں ماما پارسی اسکول، قسمت سینما، اردو بازار،گلاس ٹاور،بوٹ بیسن، حبیب بینک پلازہ، گارڈن زوودیگر مقامات میں اوفل کلیکشن پوائنٹس مقرر کیے گئے ہیں، ضلع شرقی میں اتوار بازار، اقرا یونیورسٹی، گوشت مارکیٹ ودیگر مقامات پر اوفل کلیکشن پوائنٹس بنائے گئے ہیں،ضلع ملیر میں بھٹائی آباد، گوشت مارکیٹ، فیوچر موڑ اور عید گاہ گراؤنڈ میں اوفل کلیکشن پوائنٹس بنائے گئے ہیں، ڈسٹرکٹ کورنگی میں تصویر محل سینما، کوسٹ گراؤنڈ چورنگی، پانچ ہزار روڈ، قیوم آباد گراؤنڈ، انعامی گراؤنڈ، آرآر میموریل گراونڈ، بخاری فیکٹری، فاروقی گراؤنڈ، ستارہ پیلس، وائرلیس گیٹ، بین القران زمزمہ، پائلٹ گیٹ، ماڈل پھاٹک اور برف خانہ پر اوفل کلیکشن پوائنٹس بنائے گئے ہیں، ضلع غربی اور کیماڑی کی حدود میں اورنگی قبرستان، آفتاب گراؤنڈ ودیگر مقامات اسی طرح ضلع وسطی میں لیاقت آباد برج، نزد ڈاک خانہ تھانہ ودیگر مقامات پر اوفل کلیکشن پوائنٹس مختص کیے گئے ہیں۔ نجم احمد شاہ نے آگاہ کیا کہ جام چاکرو اور سرجانی کی لینڈ فل سائٹس پر ضلع وسطی و شرقی کی حدود سے اکٹھا کردہ آلائشیں پہنچائی جائیں گی، گوند پاس حب ریور روڈ لینڈ فل سائٹ میں ضلع کیماڑی، غربی اور ڈسٹرکٹ ساؤتھ سے جمع کردہ آلائشیں جمع کی جائیں گی اور جی ٹی ایس شرافی گوٹھ پر ڈسٹرکٹ ملیر اور ڈسٹرکٹ کورنگی سے جمع کردہ آلائشیں پہنچائی جائیں گی۔ سیکرٹری بلدیات سندھ نے واضح کیا کہ تمام ضلعی انتظامیہ بشمول تمام بلدیاتی محکموں کو وزیر بلدیات سندھ کی جانب سے بطور خاص ہدایات جاری کی جاچکی ہیں اور مکمل نظم و ضبط اور کوآرڈینیشن کے ساتھ تمام ادارے اپنی ذمے داریاں سر انجام دیں گے۔