سفیر کی بیٹی پر تشدد میں 2 ٹیکسی ڈرائیور ملوث ہیں، وزیر داخلہ

54

اسلام آباد(خبر ایجنسیاں)وزیر داخلہ شیخ رشید نے کہا ہے کہ اسلام آباد میں افغان سفیر کی بیٹی پر تشدد میں 2 ٹیکسی ڈرائیور ملوث ہیں۔اسلام آباد میں افغان سفیر کی بیٹی کے مبینہ اغوا کے معاملے پرشیخ رشید کا کہنا ہے کہ افغان سفیر کی بیٹی پر تشدد میں 2ٹیکسی ڈرائیور ملوث ہیں، ان میں سے ایک تک پہنچ گئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ تحریری درخواست ملے تو دوسرے کو بھی کیمروں کے ذریعے ڈھونڈنے کی کوشش کریں گے۔وزیرداخلہ شیخ رشید نے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ افغان سفیر کی بیٹی پر تشدد کرنے کا واقعہ کل کا ہے، افغان سفیر کی بیٹی نے خود ٹیکسی ہائر کی، ٹیکسی ڈرائیور کو افغان سفیر کی بیٹی نے 500 روپے بھی دیے،افغان سفیر کی بیٹی کو ٹیکسی میں تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔افغان سفیر کی بیٹی کو دوسری ٹیکسی میں گھر پہنچایا گیا، افغان سفیر کی بیٹی کو جس ٹیکسی میں لایا گیا اسے ٹریس کر لیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ افغان سفیر کی بیٹی کے تحریری بیان پر کارروائی کی جائے گی، ابھی افغان سفیر کی بیٹی نے کوئی تحریری بیان نہیں دیا، پولیس کو تحریری درخواست موصول ہونے کے بعد کارروائی شروع کردی جائیگی، افغان سفیر کی بیٹی پر تشدد سے متعلق تحریری درخواست تاحال موصول نہیں ہوئی۔