عمران خان کے امریکا مخالف بیانات محض ڈراما ہیں،فضل الرحمن

164
سوات:جے یو آئی کے سربراہ مولانا فضل الرحمن پی ڈی ایم جلسے سے خطاب کررہے ہیں

سوات (مانیٹرنگ ڈیسک) اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) اور جمعیت علمائے اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے سوات میں جلسہ عام سے خطاب میں کہا ہے کہ عمران خان پاکستان کی سیاست کا غیر ضروری حصہ ہیں ، حکومت بنانے سے پہلے اور بعد میں بھی ان کی کوئی حیثیت نہیں، عمران خان کے امریکا مخالف بیانات محض ڈراما ہیں تم امریکا کو ائر اسپیس دے چکے ہو عوام سے جھوٹ کیوں بولتے ہو؟اپوزیشن اتحاد نے کئی مہینوں بعد ایک بار پھر حکومت کے خلاف عوامی طاقت کا مظاہرہ کیا اور اس بار سوات کے گراسی گراؤنڈ میں سجایا گیا۔جیو اور ایکسپریس نیوز کی ویب سائٹس کے مطابق جلسے میں اپوزیشن جماعتوں کے سیکڑوں کارکنوں نے شرکت کی اور مرکزی قائدین نے خطاب کیا۔ سوات میں جلسہ عام سے خطاب میں پی ڈی ایم کے سربراہ کا کہنا تھاکہ عمران خان کے جانے کے دن قریب آرہے ہیں، اس ناجائز حکومت کا خاتمہ کرکے دم لیں گے، یہ چلے ہوئے کارتوس ہیں، چلا ہوا کارتوس دوبارہ بندوق میں نہیں ڈالا جاتا۔انہوں نے کہا کہ عمران خان پاکستان کی سیاست کا غیر ضروری حصہ ہیں، حکومت بنانے سے پہلے اور بعد میں بھی عمران خان کی کوئی حیثیت نہیں۔مولانا فضل الرحمن کا کہنا تھا کہ حکومتی پالیسیوں کی وجہ سے پاکستان ایشیا میں تنہا ہوتا جارہا ہے، آپ نے سی پیک کو بھی تباہ و برباد کردیا، ہمیں آزاد اور جمہوری مستقبل کی طرف بڑھنا ہے، آزاد قوم پر اس طرح کی حکومتیں مسلط نہیں کی جاتیں۔قبل ازیںقومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر اور ن لیگ کے صدر شہباز شریف نے جلسے سے خطاب میں وزیراعظم کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹ میں عمران کی سیٹ ایسے خالی ہوتی ہے جیسے عوام کی جیب خالی ہے، وہ کہتے ہیں گھبراؤ نہیں، میں کہتا ہوں گھبراؤ انہیں بھگاؤ۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان نے ملکی معیشت برباد کردی، اتنی مہنگائی پہلے کبھی نہ تھی، اس نئے پاکستان سے تو پرانا پاکستان بہتر تھا۔شہباز شریف کا کہنا تھاکہ ہمارے لیپ ٹاپ پر یہ لوگ تنقید کرتے تھے، آج کورونا کے دنوں میں وہی لیپ ٹاپ طلبہ کے تعلیم جاری رکھنے کا سبب بنے۔ ان کا مزید کہنا تھاکہ موقع ملا تو خیبر پختونخوا کو پنجاب سے آگے لے کر جائوں گے۔پشاور بس رپیڈٹرانزٹ (بی آرٹی) پر طنز کرتے ہوئے لیگی صدر نے کہا کہ بی آر ٹی پشاور پہلے چلتی ہے، پھر جلتی ہے، بی آر ٹی پشاور اگر ن لیگ کی لیڈر شپ بناتی تو لاہور کی میٹرو سروس سے پہلے مکمل کرلیتی۔شہباز شریف نے مالم جبہ جانے کی خواہش کا اظہار بھی منفرد انداز سے کیا اورکہا کہ میں مالم جبہ جانا چاہتا ہوں، مگر وہاں جانے سے ڈرتا ہوں، ایسا نہ ہو وہاں کرپشن کسی اور نے کی ہو اور نیب پھر مجھے دھرلے، ویسے بھی نیب نیازی کو بہت شوق ہے مجھے دھرنے کا۔