اوورسیز پاکستانیوں کو ووٹ کاحق مل گیا تو ان کی حکومت نہیں آئے گی، فرخ حبیب

208

فیصل آباد: وزیرِ مملکت برائے اطلاعات و نشریات فرخ حبیب نے اپوزیشن پر تنقید کرتے ہوئے کہنا تھا کہ یہ لوگ الیکٹرونک ریفارم سے بھاگ رہے ہیں، انہیں پتہ ہے کہ اوورسیز پاکستانیوں کو ووٹ کا حق مل گیا تو ان کی حکومت نہیں آئے گی۔

تفصیلات کے مطابق  فیصل آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیرِ مملکت برائے اطلاعات و نشریات کا کہنا تھا کہ کورونا وائرس کے دوران دنیا کی معیشت بینک ڈیفالٹ کے قریب پہنچ گئی ہے جبکہ بھارت اور برطانیہ سمیت کئی ممالک کی معاشی گروتھ منفی ہو گئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ وزیرِ اعظم عمران خان نے تنقید کے باوجود اسمارٹ لاک ڈاؤن کا فیصلہ کیا، وزیرِ اعظم نے کہا کہ ہم اپنی فیکٹری، وزراعت اور کاروبار کو بند نہیں کرسکتے۔

فرخ حبیب نے کہا کہ ہمارے دور میں کورونا کی وباء کے باوجود ایکسپورٹ 25 اعشاریہ 3 بلین ڈالر ہے، ملک چھوڑ کر بھاگنے والوں کے دور میں ایکسپورٹ 24 بلین ارب ڈالر تھی جبکہ مسلم لیگ ن کے آخری 3 سال میں ترسیلاتِ زر میں اضافہ نہیں ہوا، بیرونِ ملک مقیم پاکستانیوں نے مسلم لیگ ن دور میں پیسہ نہیں بھیجا۔

وزیرِ مملکت برائے اطلاعات و نشریات نے کہا کہ اوورسیز پاکستانیوں کو پتہ تھا کہ یہ لوگ پیسہ منی لانڈرنگ کرتے ہیں، اوورسیز کو پتہ ہے کہ آج کا وزیرِ اعظم منی لانڈرنگ نہیں کر رہا جبکہ یہ لوگ بیرونِ ملک کے دورے لاکھوں ڈالر میں کرتے تھے، سروسز پلس گڈز ایکسپورٹ ہماری 60 ارب ڈالر تک چلی گئی ہیں۔

فرخ حبیب کا کہنا ہے کہ 60 ارب ڈالر میں قرض کا ایک قطرہ شامل نہیں، ن لیگ نے آئی ٹی ایکسپورٹ میں 500 ملین ڈالر کا اضافہ کیا جبکہ ہم نے آئی ٹی ایکسپورٹ میں 1 ارب 20 کروڑ ڈالر کا اضافہ کیا، پہلی بار ملک سے پیسہ باہر نہیں جا رہا، بلکہ ڈالر آ رہے ہیں۔

وزیرِ مملکت برائے اطلاعات و نشریات کا یہ بھی کہنا ہے کہ ان کے دور میں جو قرض کا پیسہ آتا تھا وہ بھی چوری کر کے باہر لے جاتے تھے، ہم ملک میں ریکارڈ ڈالر لے کر آئے ہیں۔