جاپان : لینڈ سلائیڈنگ اور سیلاب سے تباہی ، 20افراد لاپتا

120
ٹوکیو: جاپان کے شہرشنزو میں مسلسل بارش کے باعث ہونے والی لینڈ سلائیڈنگ کے بعد سیلاب نے مکانات تباہ کردیے ہیں

ٹوکیو (انٹرنیشنل ڈیسک) جاپان کے شہر شیزو میں موسلا دھار بارش کے باعث لینڈ سلائیڈنگ اور سیلاب نے تباہی مچادی۔ خبررساں اداروں کے مطابق جاپان کے دارالحکومت ٹوکیو کے مغرب میں ایک پہاڑی علاقے میں خوف ناک لینڈ سلائیڈنگ کے نتیجے میں کئی مکانات دب گئے،جس کے نتیجے میں 20افراد لاپتا ہوگئے۔ واقعے کی ایک فوٹیج سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی ہے جس میں لینڈ سلائیڈنگ میں ہونے والی تباہی کے مناظر کو دیکھا جاسکتا ہے۔ شنزو کے شعبہ حادثات کے حکام کا کہنا ہے کہ لینڈ سلائیڈنگ کا حادثہ گرم چشموں کی وجہ سے مشہور اتامی نامی گاؤں میں ہفتے کے روز پیش آیا۔شعبہ حادثات کے ایک عہدیدار تاکا میشی سوگیاما نے بتایا کہ لینڈ سلائیڈنگ کے نتیجے میں تباہ ہونے والے گھروں میں موجود کئی افراد کو نکال لیا گیا ہے ،جب کہ لاپتا افراد کی تلاش جاری ہے۔ حادثے میں کئی افراد زخمی ہوئے،جن میں سے 2کی حالت تشویش ناک ہے۔ کئی علاقوں میں تودے گرنے اور دریا میں طغیانی آنے کے باعث ہنگامی حالت کا اعلان کیا گیا ہے۔ حکام نے تقریباً 20ہزار گھرانوں کو فوری انخلا کی ہدایت جاری ہے۔ مقامی حکام نے بتایا ہے کہ شہریوں کو عارضی پناہ گاہوں میں منتقل کرنے کے لیے کارروائیاں جاری ہیں اور امدادی کارکن کام کررہے ہیں۔ خبررساں اداروں کے مطابق جاپان کے وزیراعظم یوشی ہیدے سوگا نے حادثات کا فوری نوٹس لیتے ہوئے ایک ٹاسک فورس تشکیل دے دی ہے، جو متاثرہ علاقوں میں لوگوں کی مدد کے لیے خصوصی اقدامات کر رہی ہے۔ سیلاب کے باعث بہ جانے والے گھروں میں ممکنہ طور پر کئی افراد موجود تھے،جس کے باعث ہلاکتوں کا خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے۔