موڈرنا ویکسین ملک میں کس کو لگائی جائے گی؟

234

اسلام آباد: وفاقی وزیر اور نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشنز سینٹر (این سی او سی) کے سربراہ اسد عمر کا کہنا ہے کہ امریکا سے ملنے والی کورونا سے تحفظ فراہم کرتی ویکسین موڈرنا صرف ملک بھر میں بیرون ممالک ورک اور اسٹڈی ویزا پر جانے والوں کو لگائی جائے گی۔

تفصیلات کے مطابق  اسد عمر نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر ٹوئٹ کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکی حکومت کی طرف سے25لاکھ خوراکیں موڈرنا ویکسین کی ملی ہیں اور  موڈرنا ویکسین بیرون ممالک ورک اور اسٹڈی ویزا پر جانےوالوں کو لگائی جائیں گی۔

وفاقی وزیر اسد عمر نے امریکی صدر جو بائیڈن کی ترقی پسندانہ کورونا پالیسی کو قابلِ تعریف بھی قرار دیا جبکہ امریکی حکومت کی جانب سے ارسال کردہ موڈرنا ویکسین کی 25 لاکھ خوراکیں مل گئیں ہیں۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز امریکا کی طرف سے کورونا کے خلاف تعاون کے سلسلے میں پاکستان کو موڈرنا ویکسین کی 25لاکھ خوراکیں اسلام آباد پہنچیں ہیں اور موڈرنا ویکسین کی یہ خوراکیں امریکا کی جانب سے پاکستان کو عطیہ کی گئیں ہیں۔

پاکستان کو موڈرنا ویکسین کی 25 لاکھ خوراکیں فراہم کرنے سے متعلق امریکی وزیرخارجہ اینتھونی بلینکن نے سوشل میڈیا پر جاری بیان میں کہا تھا کہ پاکستان کو موڈرنا ویکسین کی فراہمی دونوں ملکوں میں پائیدار دوستی اور کوویڈ 19 پر تعاون کی عکاس ہے۔

واضح رہے وفاقی وزیر اور این سی او سی کے سربراہ اسد عمر کا کہنا ہے کہ بیرون ملک جانے والوں کو موڈرنا ویکیسن ترجیحی بنیادوں پر لگائی جائے گی جبکہ امریکی ساختہ کورونا ویکسین کی ملک گیر تقسیم آخری مراحل میں داخل ہوگئی ہےجس کے بعد ملک میں یہ ویکسین لگانے کا آغاز  5جولائی سے کردیا جائے گا۔