حتمی فیصلے تک رمضان شوگر ملز کیخلاف کارروائی نہ کرنے کا حکم

139

لاہور ہائیکورٹ نے رمضان شوگر ملز ٹیکس آڈٹ نوٹس کیخلاف درخواست پر تفصیلی فیصلہ جاری کر دیا۔

عدالت نے ایف بی آر کو ایک ماہ میں ٹیکس آڈٹ کیخلاف اپیل پر فیصلہ کرنے کا حکم دے دیا جب کہ ایف بی آر کو اپیل کے حتمی فیصلے تک رمضان شوگر ملز کیخلاف تادیبی کارروائی سے بھی روک دیاگیا۔

عدالت نے رمضان شوگر ملز کو ایف بی آر کو مطلوبہ دستاویزات جمع کروانے کا بھی حکم دیا۔

جسٹس جواد حسن کے جاری 11 صفحات کے فیصلے کو عدالتی نظیر بھی قرار دیا گیا ہے۔ فیصلے کے مطابق ایف بی آر نے رمضان شوگر ملز کیخلاف ابھی کوئی تادیبی حکم جاری نہیں کیا،  ایف بی آر نے فی الحال رمضان شوگر ملز سے چند دستاویزات طلب کی ہیں رمضان شوگر ملز کے پاس ایف بی آر کی کارروائی کیخلاف متبادل فورمز موجود ہیں رمضان شوگر مل ٹیکس ریفرنس کے طور پر ہائیکورٹ سے رجوع کر سکتی ہے۔

 فیصلے میں کہا گیا ہے کہ ٹیکس قانون کے تحت ایک ماہ میں رمضان شوگر ملز ٹیکس آڈٹ نوٹس کیخلاف اپیل پر فیصلہ کرے آئین کے تحت فیئر ٹرائل ہر شہری کا ناقابل تردید حق ہے ایف بی آر کا انکم ٹیکس آرڈیننس کی دفعہ 122 کے تحت ریکارڈ طلب کرنا قانونی جواز ہے۔

فیصلے کے مطابق لاہور ہائیکورٹ کو انکم ٹیکس آرڈیننس کے تحت جاری نوٹس میں مداخلت کرنے کی ضرورت نہیں،  رمضان شوگر ملز کی ٹیکس آڈٹ نوٹس کیخلاف درخواست قبل از وقت ہے۔