اورنگی کو شہر سے ملانے والا طویل بنا رس پل تاریکی میں ڈوب گیا

84

کراچی (اسٹاف رپورٹر) کراچی کی سب سے بڑی کچی آبادی اورنگی ٹائون کو شہر سے ملانے والا طویل بنارس پل تاریکی میں ڈوب گیا ،بنارس پل پر لگی سیکڑوں اسٹریٹ لائٹ اچانک خراب ہونے سے نہ صرف حادثات میں اضافہ ہو گیا بلکہ لوٹ مار کے واقعات بھی بڑھ گئے ہیں پولیس کے عدم تعاون کی وجہ سے متاثرین رپورٹ درج کرانے سے گریز کرنے لگے۔تفصیلات کے مطابق بنا رس پل اورنگی ٹا ئون پر اسٹریٹ لا ئٹ کے مسئلے کو سنگین بنا دیا گیا ہے کئی ماہ خراب رہنے کے بعد چند ماہ قبل بنارس پل کی اسٹریٹ لائٹ بحال ہوئی تھی مگر بحالی کے چند روز بعد ہی اسٹریٹ لائٹ خراب ہو گئیں جس کی وجہ سے پل تا ریکی میں ڈوب گیا ہے۔بتایا جاتا ہے کہ اورنگی ٹاؤن لاکھوں نفوس پر مشتمل ہے اور بنارس پل اورنگی ٹاؤن کے مکینوں کے لیے واحد پل ہے جس سے یومیہ لاکھوں شہری گذرتے ہیں مگر حیرت انگیز امر یہ ہے کہ بنارس پل پر سیکورٹی پر مامور پو لیس نفر ی بھی ہٹا دی گئی ہے جس کی وجہ سے شہریوں میں خوف پایا جاتا ہے۔المنصوری سو شل ڈیو لپمنٹ اینڈ ویلفیئر آرگنا ئز یشن کے صد ر اور سما جی کا رکن ظہو ر احمد منصوری، نا ئب صدر شا ہد علی اور جنر ل سیکرٹری محمو د علی نے کے مطابق بنارس پل تقریبا ً پو نے دو کلو میٹر ہے اس پر دن رات ہزاروں کی تعداد میں چھو ٹی بڑی گا ڑیاں گذرتی ہیں اسٹریٹ لا ئٹ کا معقول بندوبست نہ ہو نے کے سبب آئے دن اسٹریٹ کرائم کے واقعات رونما ہو رہے ہیں جبکہ90فیصد متاثرہ افراد واقعہ کی رپو رٹ نہیں کر تے جس کی وجہ سے یہا ں ہو نے والے اسٹریٹ کر ائم کے واضح اعداد وشما ر سا منے نہیں آتے۔انہوں نے ایڈمنسٹریٹر کر اچی اور متعلقہ اداروں سے اپیل ہے کہ اس سنگین مسئلے کا تدارک کیا جا ئے اور اس با ت کو یقینی بنا یا جائے کہ بنا رس پل اورنگی رات میں تا ریکی میں ڈوبا نہ رہے تا کہ بنارس پل پر سفر کرنیوالے اورنگی ٹاؤن کے رہائشی بلاخوف و خطر سفر کرسکیں ،پل پر پولیس موبائل کی موجودگی یقینی بنائی جائے تاکہ اسٹریٹ کریمنل کے خلا ف بر وقت کارروائی ممکن ہو سکے۔