افغانستان میں ایکشن کیلیے پاکستانی زمین استعمال کرنے کی اجازت نہیں دیں گے، عمران خان

133

اسلام آباد: وزیر اعظم عمران خان نے امریکہ کو افغانستان میں کارروئی کے لیے اڈے دینے سے صاف انکار کر دیا ہے جبکہ یہ بات  وزیرِ اعظم عمران خان نے امریکی ٹی وی کو دیئے گئے انٹرویو میں کہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے غیرملکی میڈیاکوانٹرویو دیتے ہوئے واضح کیا ہےکہ امریکی فوج کے انخلا کے بعد افغانستان میں آپریشن کیلیے پاکستانی اڈے کو استعمال کرنے نہیں دیں گے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ پاکستان نے افغان امن عمل میں قلیدی کردار ادا کیاہے،جس کو دنیا بھر میں سراہا گیا ہے۔

وزیر اعظم کا مزید کہنا تھا کہ ایسا ممکن نہیں پاکستان افغانستان کیخلاف سر زمین استعمال ہونے دے، پاکستان سی آئی اے کو اڈے استعما ل کرنے کی اجازت نہیں دے گا۔

یاد رہے اس قبل وزیراعظم عمران خان نے ہمیشہ افغان عمل کی حمایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ افغانستان کے مسئلے کا کوئی فوجی حل نہیں ، اسے سیاسی طور پر حل کرنا ہوگا ۔

خیال رہے امریکا کی جانب سے گیارہ ستمبر تک افغانستان سے انخلا کے بعد غیر ملکی میڈیا قیاس آرائیاں کررہا تھا کہ امریکا افغانستان میں کارروائی کیلئے پاکستان سے اڈے لے رہا ہے تاہم حکومت پاکستان کا ہمیشہ سے موقف رہا ہے کہ پاکستان خطے میں پائیدار امن کا خواہاں ہے اور پاکستان کی سر زمین کسی دوسرے ملک کیخلاف استعمال کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

دوسری جانب  وزیرِ اعظم عمران خان کے معاونِ خصوصی شہباز گل نے ٹوئٹر پر جاری بیان میں کہا ہے کہ وزیرِ اعظم عمران خان کا ٹی وی کو دیا گیا انٹرویو پاکستانی وقت کے مطابق پیر کی صبح 3 بجے نشر کیا جائےگا۔