عدالت کرپٹ حکمران و بیوروکریسی کی سزا عوام کو نہ دیں، صاحبزادہ زبیر

94

حیدرآباد(اسٹاف رپورٹر) جمعیت علماءپاکستان و ملی یکجہتی کونسل کے صدر ڈاکٹر صاحبزادہ ابوالخیرمحمدزبیرنے کہا ہے کہ چیف جسٹس پاکستان نے سندھ کی حکومت اور اس کی انتظامیہ کےلےے جو کچھ ریمارکس دیے ہیں وہ اہلیان سندھ کے دل کی آواز ہے۔ انہوں نے غلط لیز دینے والوں کے خلاف مقدمہ کرنے کی بات کر کے انصاف کا بول بالا کیا ہے قوم منتظر ہے کہ ان بڑے لوگوںکو کب سزا دی جائے گی جنہوں نے قانون کے خلاف اقدامات کرکے کراچی بلکہ سندھ کا بیڑا غرق کردیا ہے ۔ چیف جسٹس سے اپیل ہے کہ وہ بڑی عمارتیں ومکانات گرانے کے احکامات پر نظر ثانی کریں کرپٹ حکمرانوں اورکرپٹ بیورکریسی کی غلطیوں کی سزا عوام کو نہ دیںان کے لیے بھی اسی طرح سہولت پیدا کریں جس طرح نبی گالہ کی غیر قانونی تعمیر کےلےے کچھ جرمانہ لیکر اسکو قانونی بنانے کےلےے احکامات دیے گئے تھے اور اگر تعمیرات کا گرانا بہت ضروری ہو توحکومت کو ہدایت دی جائے کہ وہ جلد ہزاروں متاثرین کےلےے متبادل جگہ کا بندوبست کرے ورنہ اس کے بغیر بہت بڑا انسانی المیہ پیدا ہوگا۔