ای ووٹنگ دھاندلی روکنے کا واھد طریقہ ہے،وزیراعظم

173
اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان مشترکہ مفاد کونسل کے اجلاس کی صدارت کررہے ہیں

اسلام آباد(نمائندہ جسارت) وزیر اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ الیکٹرانک ووٹنگ دھاندلی روکنے اور شفافیت کو یقینی بنانے کاواحد آپشن ہے۔ جمعرات کو وزیراعظم کی زیرصدارت اجلاس میں انتخابی عمل میں الیکٹرانک ووٹنگ مشین کے استعمال پر بریفنگ دی گئی جب کہ انتخابی اصلاحات کے ضمن میں قانون سازی پر اب تک ہونے والی پیش رفت پر تفصیلی طور پر آگاہ کیا گیا۔اجلاس میں وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی شبلی فراز، سینیٹ میں قائد ایوان سینیٹر ڈاکٹر شہزاد وسیم، وزیر ریلوے اعظم خان سواتی، وزیر مملکت برائے اطلاعات و نشریات فرخ حبیب اور مشیر وزیر اعظم بابر اعوان شریک تھے۔اس موقع پر وزیراعظم نے الیکٹرانک ووٹنگ مشین کے انتخابی عمل میں استعمال میں شفافیت اور تمام آئینی تقاضوں کو پورا کرنے کی ہدایت کی۔عمران خان کا کہنا تھا کہ موجودہ حکومت انتخابی عمل میں شفافیت یقینی بنانے کے لیے پرعزم ہے۔انہوں نے کہاکہ اوورسیز پاکستانی ملک کا اثاثہ ہیں، ان کو انتخابی عمل میں لازماً شریک بنائیں گے، انتخابی اصلاحات اور الیکٹرانک ووٹنگ اور
اوورسیز پاکستانیوں کو حق رائے دہی کا عمل جلد مکمل کیا جائے۔ علاوہ ازیں راوی اربن سٹی اور سینٹرل بزنس ڈسٹرکٹ منصوبے پر پیش رفت کے حوالے سے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ پانی کی کمی کو پورا کرنے اور واٹر ٹریٹمنٹ پلانٹس کے لیے جدید ٹیکنالوجی کا استعمال ناگزیر ہے۔شرکاء کو بتایا گیا کہ راوی سٹی میں اقرا یونیورسٹی، یو ایم ٹی اور آئی ایس سی اپنے کیمپس قائم کریں گے ،اقرا یونیورسٹی نے اپنے کیمپس کے ساتھ ساتھ اسپتال کی تعمیر میں بھی دلچسپی ظاہر کی ہے۔مزید برآں وزیراعظم نے قومی رابطہ کمیٹی برائے ہائوسنگ، تعمیرات و ترقی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے حکومت سندھ کی طرف سے سرکاری اراضی کا ڈیٹا تاخیر سے ملنے پر تشویش کا اظہار کیا۔عمران خان کا کہنا تھا کہ تعمیرات کا شعبہ ملکی ترقی اور معاشی نمو میں اہم ترین کردار ادا کر رہا ہے، زراعت کے زیر استعمال اور جنگلات کے لیے مختص زمین کسی صورت تعمیرات کے لیے استعمال نہیں ہونی چاہیے،اس سال مون سون میں سب سے بڑی شجر کاری مہم کے لیے تیاری کی جائے۔انہوںنے کہا کہ وفاقی محکمے اور صوبائی حکومتیں سرمایہ کاروں کے مسائل فوری حل کریں ۔وزیر اعظم نے نقشہ بندی کے عمل کو مزید تیز کرنے کی ہدایت کی۔