یورپی یونین نے کورونا منصوبے کی منظوری دے دی

92
لکسمبرگ: یورپی یونین کے نئے پراسیکیوٹر دفتر کے افتتاح کے بعد عہدے دار ذرائع ابلاغ کے نمایندوں سے گفتگو کررہے ہیں

برسلز (انٹرنیشنل ڈیسک) یورپی کونسل نے اعلان کیا ہے کہ 27 رکن ممالک کی جانب سے کورونا وائرس سے بحالی کے مالی منصوبے کی منظوری کے بعد رواں ماہ اس پر عمل شروع کردیا جائے گا۔ پرتگال کے وزیر اعظم انتونیو کوسٹا نے کہا کہ یورپی یونین اب اس قابل ہے کہ وہ اپنے شہریوں کی سماجی اور معاشی بہتری کے لیے فنڈ مختص کر سکے۔ یورپ کے اس 750 ارب یورو کے منصوبے کو ’نیکسٹ جنریشن یورپین یونین‘ کا نام دیا گیا ہے۔ دوسری جانب کئی برس کی تیاری کے بعد یورپی یونین کا پبلک پراسیکیوٹر کے دفتر نے کام کرنا شروع کردیا۔ لکسمبرگ میں یہ دفتر یورپی یونین کے بجٹ کے استعمال سے متعلق ممکنہ جرائم کی چھان بین اور ذمے داران کے خلاف قانونی کارروائی کے لیے قائم کیا گیا ہے۔ ان جرائم میں بدعنوانی، سبسڈی کے لیے دھوکا دہی اور یورپی رقوم کے غلط استعمال جیسے جرائم شامل ہوں گے۔ اس کے علاوہ یہ دفتر قومی سرحدوں کے پار سیلز ٹیکس کے فراڈ کا سد باب بھی کرے گا۔ یہ اتھارٹی اپنے طور پر تحقیقات کر سکتی ہے اور اْس کے بعد ملکی سطح پر اپنی چھان بین کے مطابق فرد جرم عائد کرنے کی مجاز ہو گی۔ یورپی پبلک پراسیکیوٹر کے دفتر میں 22 رکن ممالک کے نمایندے شامل ہوں گے۔