ریسٹورنٹس ایسوسی ایشن کا ایس اوپیز کیساتھ ریسٹورنٹس کھولنے کامطالبہ

106

کراچی (اسٹاف رپورٹر) آل پاکستان ریسٹورنٹس ایسوسی ایشن اور وفاق ایوانہائے تجارت و صنعت پاکستان نے ایس اوپیز کے ساتھ ریسٹورنٹس کھولنے کامطالبہ کرتے ہوئے واضح کیا ہے کہ اجازت نہ ملنے کی صورت میں ریسٹورنٹس مالکان اپنے ملازمین کے ہمراہ وزیر اعظم ہاؤس کا رخ کرنے پر مجبور ہونگے۔ بدھ کو کراچی پریس کلب میں آل پاکستان ریسٹورنٹس ایسوسی ایشن کے کنوینر وقاص عظیم نے ایف پی سی سی آئی کے صدر ناصر حیات مگوں کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ ماسوائے چند شعبوں کے ہر کاروباری شعبہ محدود انداز میں کام کررہا ہے، ریستوران انڈسٹری سے 35 لاکھ افراد کا روزگار وابستہ ہے اور یہ انڈسٹری کورونا وباء کے 14 ماہ کے دوران مسلسل 12 ماہ سے بندش کا شکار ہے،ایف پی سی سی آئی کے صدر ناصرحیات مگوں نے کہاکہ کورونا وباء کے بعد چھوٹے بڑے و درمیانے ریسٹورنٹس مالکان بدترین مالی مشکلات کا شکار ہوگئے ہیں،اب ہمیں کورونا وبا کے ساتھ جینا ہے اور یہ کونسی منطق ہے کہ کھانا کھانے سے کورونا پھیلتاہے، ریسٹورنٹس کو ڈائننگ کی بھی اجازت دی جائے،ایف پی سی سی آئی کے نائب صدر اطہرچاولہ نے کہا کہ بندش سے ریسٹورنٹس کا 15 روزہ ایڈوانس میں خریدا ہوا خام مال ضائع ہوجائے گا۔ ریسٹورنٹ نہ کھولے گئے تو ہم عید کے بعد وزراعظم ہاؤس پر احتجاج کریں گے۔